تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
عرب اتحاد نے یمن میں حوثی ملیشیا کے 200 قیدی رہا کردیے
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

جمعرات 27 جمادی الاول 1441هـ - 23 جنوری 2020م
آخری اشاعت: منگل 28 ربیع الاول 1441هـ - 26 نومبر 2019م KSA 19:23 - GMT 16:23
عرب اتحاد نے یمن میں حوثی ملیشیا کے 200 قیدی رہا کردیے
عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی ۔
العربیہ ڈاٹ نیٹ

عرب اتحاد نے یمن میں گرفتار کیے گئے حوثی ملیشیا کے دو سو قیدیوں کو رہا کردیا ہے۔

عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے منگل کے روز ایک بیان میں ان قیدیوں کی رہائی کی اطلاع دی ہے اور کہا ہے کہ عالمی ادارہ صحت کے تعاون سے یمن کے دارالحکومت صنعاء سے مریضوں کو دوسرے ممالک میں منتقل کرنے کے لیے پروازیں چلائی جائیں گی اور وہاں وہ اپنا علاج کراسکیں گے۔

انھوں نے کہا کہ عرب اتحاد کی قیادت اسٹاک ہوم میں گذشتہ سال دسمبر میں طے شدہ سمجھوتے کے تحت یمن میں جاری بحران کے حل کے لیے کوششوں کی حمایت جاری رکھے گی۔وہ قیدیوں کے تبادلے کے لیے سمجھوتے کی بھی حمایت کررہی ہے اور وہ اختلافات کے خاتمے کے لیے بھی سازگار ماحول فراہم کررہی ہے۔‘‘

اسٹاک ہوم سمجھوتے میں یمن کے ساحلی شہر الحدیدہ سے طرفین کے فوجیوں کے انخلا پراور وہاں غیرجانبدار مبصرین کی تعیناتی پر زوردیا گیا تھا تاکہ الحدیدہ کی بندرگاہ پربیرون ملک سے درآمدہ غذائی اجناس کو بلا روک ٹوک اتارا جاسکے اورانھیں وہاں سے ملک کے دوسرے علاقوں میں منتقل کیا جاسکے۔

کرنل ترکی المالکی کا کہنا تھا کہ قیدیوں کا تبادلہ ایک انسانی معاملہ ہے۔عرب اتحاد نے یمن میں انسانی صورت حال بالخصوص یمنی عوام کی صحت کو بہتر بنانے کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھی ہوئی ہیں اور اس ضمن میں متعلقہ بین الاقوامی قوانین اور سمجھوتوں کی پاسداری کی جا رہی ہے۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند