تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2020

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
چین کا امریکی ذمے داران اور ارکان پارلیمنٹ پر ویزا پابندیاں عائد کرنے پر غور
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

پیر 1 جمادی الثانی 1441هـ - 27 جنوری 2020م
آخری اشاعت: منگل 5 ربیع الثانی 1441هـ - 3 دسمبر 2019م KSA 12:42 - GMT 09:42
چین کا امریکی ذمے داران اور ارکان پارلیمنٹ پر ویزا پابندیاں عائد کرنے پر غور
العربیہ ڈاٹ نیٹ ، ایجنسیاں

بیجنگ حکومت ہانگ کانگ میں احتجاج سے متعلق واشنگٹن کے موقف کے سبب امریکی سفارتی پاسپورٹس کے حامل افراد کو چین میں داخل ہونے سے روک سکتا ہے۔ اس کے علاوہ امریکی ذمے داران اور قانون ساز ارکان کے لیے ویزوں کے اجرا پر بھی قیود لگائی جا سکتی ہیں۔ رائٹرز خبر رساں ایجنسی نے یہ بات منگل کے روز چینی اخبار گلوبل ٹائمز کے چیف ایڈیٹر "ھو زیکین" کے حوالے سے بتائی۔

امریکی وزارت خارجہ نے پیر کے روز اعلان کیا تھا کہ اس نے امریکی فوج کے بحری جہازوں اور طیاروں کی جانب سے پیش کردہ ہانگ کانگ کے دوروں کی درخواستوں کا جائزہ معلق کر دیا ہے۔ یہ اقدام امریکی ایوان نمائندگان کی جانب سے بیجنگ کے زیر انتظام شہر (ہانگ کانگ) میں مظاہرین کی سپورٹ کے واسطے قانون سازی منظور ہونے کے جواب میں کیا گیا۔

چینی حکومت نے انسانی حقوق کی غیر سرکاری تنظیم "ہیومن رائٹس واچ" پر بھی پابندیاں عائد کر دی ہیں۔ چینی وزارت خارجہ کی ترجمان نے بیجنگ میں ایک مختصر پریس بریفنگ کے دوران تنظیم پر الزام لگایا کہ وہ ہانگ کانگ میں انتہا پسندوں کی پرتشدد سرگرمیوں کی سپورٹ کر رہی ہے۔

چین گذشتہ ہفتے یہ باور کرا چکا ہے کہ اگر امریکا نے ہانگ کانگ میں مداخلت کا سلسلہ جاری رکھا تو "بھرپور اور سخت اقدامات" کیے جائیں گے۔

یاد رہے کہ جمہوریت کی حمایت میں 6 ماہ سے جاری مظاہروں نے نیم خود مختاری رکھنے والے چینی شہر ہانگ کانگ کو ہلا کر رکھ دیا ہے۔

اتوار کے روز ہانگ کانگ میں سیکڑوں افراد نے امریکی قونصل خانے کی جانب مارچ کیا۔ اس مارچ کا مقصد چینی حکومت کے مخالف مظاہروں کے لیے امریکا کی سپورٹ پر تشکر کا اظہار تھا۔ مارچ میں شریک افراد نے امریکی پرچم لہرایا۔ بعض شرکاء کے لباس پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی حمایت میں عبارتیں تحریر تھیں۔ مارچ کے بعض شرکاء نے بینر اٹھا رکھے تھے جن پر یہ تحریر تھا کہ "صدر ٹرمپ .. براہ مہربانی آپ ہانگ کانگ کو آزاد کرائیں"۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند