تمام حقوق بحق العربیہ نیوز چینل محفوظ ہیں © 2019

دوست کو بھیجئے

بند کیجئے
سعودی کمپنی ’کوڈڈ مائنڈز ‘پاکستان میں تعلیمی ٹیکنالوجی میں سرگرمیاں شروع کرنے کو تیار
دوست کا نام:
دوست کا ای میل:
بھیجنے والے کا نام:
بھیجنے والے کا ای میل:
Captchaکوڈ

 

بدھ 18 محرم 1441هـ - 18 ستمبر 2019م
آخری اشاعت: اتوار 10 رجب 1440هـ - 17 مارچ 2019م KSA 21:08 - GMT 18:08
سعودی کمپنی ’کوڈڈ مائنڈز ‘پاکستان میں تعلیمی ٹیکنالوجی میں سرگرمیاں شروع کرنے کو تیار
سعودی کمپنی ’’کوڈڈ مائنڈز‘‘ کے زیر انتظام دبئی میں ہونے والی ایک کلاس کا مںظر: فائل فوٹو
العربیہ ڈاٹ نیٹ

سعودی عرب کی تعلیمی ٹیکنالوجی کے شعبے میں کام کرنے والی کمپنی ’کوڈڈ مائنڈز ‘پاکستان میں سرگرمیاں شروع کرنے کے لیے انتظامات کو حتمی شکل دے رہی ہے۔ اس کمپنی کے بانی اور موجد اعلیٰ (اینوویشن) افسر سعودی شہری عمر فاروقی نے کہا ہے کہ ’’پاکستان میں تعلیمی ٹیکنالوجی کے شعبے میں ہمارے کام کا آغاز اب ہفتوں کا معاملہ رہ گیا ہے۔ اس وقت ہم لاجسٹک انتظامات کو حتمی شکل دے رہے ہیں‘‘۔

یہ سعودی کمپنی متحدہ عرب امارات میں تعلیمی ٹیکنالوجی کے شعبے میں سرکاری اور نجی اسکولوں میں تین سال سے بڑی عمر کے بچوں کے لیے پراجیکٹ کی بنیاد پر عملی کورسز پیش کر رہی ہے۔ حال ہی میں اس کمپنی نے العرابی انوسٹمنٹ کے ساتھ شراکت داری شروع کی ہے جس کے بعد اس کی مالی قدر چار کروڑ اماراتی درہم ہوگئی ہے۔

عمر فاروقی کے مطابق ’’ہم پاکستان میں اپنے کام کے آغاز کے لیے لاجسٹک انتظامات کو حتمی شکل دے رہے ہیں۔ ہم ملک کے تین بڑے شہروں کراچی، لاہور اور اسلام آباد میں کلاسیں شروع کر رہے ہیں۔ اس کے بعد اس پروگرام کو پورے پاکستان میں پھیلا دیا جائے گا‘‘۔ انھوں نے اپنے اس منصوبے کو مقصد کے تحت ’’ذمے دارانہ سرمایہ کاری‘‘ قرار دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ’’ہم بہت جلد پاکستان میں ہر کہیں موجود ہوں گے، خواہ یہ کوئی شہر ہو یا گاؤں ہم ملک کے کونے کونے میں پہنچیں گے‘‘۔ انھوں نے گذشتہ ماہ پاکستان کے صدر عارف علوی سے ملاقات کی تھی اور ان سے تعلیمی ٹیکنالوجی کے شعبے میں مشترکہ منصوبہ شروع کرنے کے بارے میں تبادلہ خیال کیا تھا۔ اس کے تحت پاکستان کے سرکاری اور غیر سرکاری تعلیمی اداروں اور روایتی دینی مدارس کو موثر تدریسی سرگرمیوں میں معاون ٹیکنالوجی مہیا کی جائے گی۔

عمر فاروقی کا کہنا تھا :’’ہم اس بات میں یقین رکھتے ہیں کہ ہم تعلیم کے شعبے میں ایک نئے انقلاب کا آغاز کرنے جا رہے ہیں۔ یہ انقلاب صرف اس خطے ہی میں نہیں بلکہ دنیا بھر میں برپا ہوگا‘‘۔

نقطہ نظر

مزید

قارئین کی پسند