.

ایران: عراق کی سرحد کے نزدیک علاقے میں شدید زلزلہ ، دو افراد ہلاک ، 255 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کی سرحد کے نزدیک واقع ایران کے مغربی صوبے کرمان شاہ میں 6.1 کی شدت کا زلزلہ ہے جس کے نتیجے میں دو افراد ہلاک اور 255 زخمی ہوگئے ہیں۔

اتوار کو علی الصباح 2 بج کر 45 منٹ پر آنے والے اس زلزلے کا مرکز کرمان شاہ کا شہر تازہ آباد تھا۔امریکا کے ارضیاتی سروے کے مطابق اس زلزلے کی ریختر اسکیل پر شدت 6.1 تھی۔

العربیہ نیوز چینل کے نمائندے نے اطلاع دی ہے کہ اس زلزلے کے مابعد متعدد جھٹکے عراق کے دارالحکومت بغداد ، صوبے دیالا اور سلیمانیہ میں واقع بعض شہروں میں بھی محسوس کیے گئے ہیں۔ایران کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایرنا نے بھی عراق میں مابعد زلزلے کے متعدد جھٹکوں کی اطلاع دی ہے۔

صوبہ کرمان شاہ میں زلزلے سے متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیاں جاری ہیں ۔اس کی سوشل میڈیا پر تصاویر اور ویڈیو ز جاری کی گئی ہیں۔ ان میں لوگوں کو اسپتال میں منتقل کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔البتہ ان سے یہ بھی اندازہ ہوتا ہے کہ اس شدید زلزلے سے انفرااسٹرکچر کو بہت تھوڑا نقصان پہنچا ہے۔

واضح رہے کہ مغربی صوبہ کرمان شاہ میں نومبر 2017ء میں 7.3 کی شدت کا شدید زلزلہ آیا تھا جس کے نتیجے میں 620 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔اسی زلزلے سے ہمسایہ ملک عراق میں بھی آٹھ افراد مارے گئے تھے۔ کرمان شاہ ہی میں گذشتہ ماہ جولائی میں 5.9 کی شدت کے زلزلےکے نتیجے میں کم سے کم 130 افراد زخمی ہوگئے تھے ۔

ایران بڑی فالٹ لائن پر واقع ہے اور یہاں تھوڑے تھوڑے وقفے سے ہلکے اور زیادہ شدت کے زلزلے آتے رہتے ہیں۔2003ء میں 6.6 کی شدت کے زلزلے سے ایران کا تاریخی شہر بام ملیا میٹ ہوگیا تھا اور 25 ہزار سے زیادہ افراد مارے گئے تھے۔