.

الحرمین الشریفین میں کووِڈ-19 سے بچاؤ کے لیے احتیاطی تدابیر کی پاسداری کی ہدایت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی صدارتِ عامہ برائے امور الحرمین الشریفین کے سربراہ الشیخ عبدالرحمٰن بن عبدالعزیز السدیس نے مکہ مکرمہ میں المسجد الحرام اور مدینہ منورہ میں مسجد نبوی صلی اللہ علیہ وسلم میں آنے والے تمام نمازی اور زائرین حضرات کوہدایت کی ہے کہ وہ کووِڈ-19 سے بچاؤ کے لیے جاری کردہ رہ نما ہدایات کی پیروی کریں۔

انھوں نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’کرونا وائرس کی وبا ابھی جاری ہے،لوگوں کو حکام کے ساتھ تعاون کرنا چاہیے اور رمضان المبارک کے دوران میں اس مہلک وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے نافذ کردہ حفاظتی احتیاطی تدابیر کی پاسداری کرنی چاہیے۔

الشیخ السدیس نے دونوں مقدس مساجد میں آنے کے خواہاں افراد کو ہدایت کی ہے کہ وہ کووِڈ-19 کی ویکسین لگوائیں، چہرے پر ماسک پہن کررکھیں اور سماجی فاصلہ اختیار کریں۔

سعودی عرب میں سوموار کی شام رمضان المبارک کا چاند نظر آگیا تھا اورآج منگل کو وہاں پہلا روزہ ہے۔ رؤیت ہلال کے بعد المسجد الحرام میں پہلی نماز تراویح ادا کی گئی تھی۔اس دوران میں نمازی حضرات نے ایک دوسرے سے فاصلہ اختیار کررکھا تھا اور وہ ہرنمازی کے لیے مخصوص نشان زد جگہ پر کھڑے تھے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق صرف ویکسین لگوانے اور وزارت صحت کی توکلنا ایپ کے ذریعے اجازت نامہ حاصل کرنے والے افراد ہی کو مسجد حرام میں نماز تراویح کے لیے داخل ہونے کی اجازت ہے۔

صدارت عامہ برائے امورالحرمین الشریفین نے رمضان کے آغاز سے قبل مسجد حرام میں عازمین عمرہ کی تعداد 50 ہزار اور روزانہ نمازیوں کی تعدادایک لاکھ تک بڑھانے کا فیصلہ کیا تھا اور کہا تھا کہ صرف ویکسین لگوانے والے افراد ہی کو عمرہ اور نمازیں ادا کرنے کی اجازت دی جائے گی۔