.

ڈرائیونگ کے دوران اجلاس میں شرکت ، حفاظتی بیلٹ نے امریکی سینیٹر کا بھانڈا پھوڑ دیا !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

معروف میٹنگ پروگرام ایپلی کیشن ZOOM کی جانب سے فرضی پس منظر کی سہولت مہیا کی جاتی ہے۔ اسی پس منظر کی مدد لیتے ہوئے اوہایو سے تعلق رکھنے والے امریکی سینیٹر اینڈرو برینر نے گاڑی چلانے کے دوران میں ریاستی کونسل کی قیادت کے اجلاس میں شرکت کی۔

اگر برینر کے سینے پر حفاظتی سیٹ بیلٹ ظاہر نہ ہوتی تو یہ ہی محسوس ہونا تھا کہ سنیٹر موصوف اجلاس کے دوران اپنے دفتر میں برا جمان ہیں۔ دل چسپ بات یہ ہے کہ مذکورہ اجلاس اسی روز منعقد ہوا جس روز ریاست کی قانون ساز کونسل نے "منتشر دماغ ڈرائیوروں" کی سرزنش کے لیے قانون کے بل پر بحث شروع کی۔ اس کے نتیجے میں برینر کی شرمندگی دو گنا ہو گئی۔

برطانوی اخبار "دی ٹائمز" کے مطابق 50 سالہ ریپبلکن سینیٹر نے اپنی رکی ہوئی گاڑی میں بیٹھے ہوئے اجلاس کا آغاز کیا۔ کچھ دیر بعد وہ مختصر دورانیے کے لیے اجلاس سے کوچ کر گئے۔ وقفے کے بعد وہ ایک بار پھر نمودار ہوئے تو ان کے پیچھے فرضی پس منظر تھا گویا کہ وہ اپنے گھر کے اندر دفتر میں برا جمان ہیں۔

اس حوالے سے برینر نے ایک مقامی اخبار کو بتایا کہ "میرا دماغ منتشر نہیں تھا ،،، میں ڈرائیونگ کے حوالے سے چوکنا ہونے کے ساتھ ساتھ اجلاس کی کارروائی بھی سن رہا تھا۔ میں نے دو مختلف مقامات پر مسلسل دو اجلاسوں کا انعقاد کیا تھا۔ میرا دہھیان وڈیو پر نہیں ہوتا ہے ، میرے لیے یہ ٹیلی فون کال کی طرح ہے"۔

گذشتہ پیر کے روز پیش کیے جانے والے نئے قانون کے مطابق 'رابطے کے برقی آلات' کے استعمال کے دوران گاڑی چلانے پر پابندی ہو گی۔ اس طرح ڈرائیونگ کے دوران متن لکھنا، بھیجنا یا پڑھنا ، وڈیو کلپوں کو دیکھنا، تصاویر لینا یا گاڑی چلاتے ہوئے براہ راست ٹیلی کاسٹ کرنا غیر قانونی افعال ہوں گے۔