.

آسٹریا نےحزب اللہ پرپابندی عاید کردی،تنظیم کے عسکری اور سیاسی ونگ دہشت گرد قرار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یورپی ملک آسٹریا نے لبنانی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کو کالعدم قرار دیتے ہوئے تنظیم کے سیاسی اور عسکری بازؤں کو 'دہشت گرد' قرار دیا ہے۔ اس سے قبل بعض یورپی ممالک میں حزب اللہ کے صرف عسکری ونگ کو دہشت گرد قرار دیتے ہوئے اس پرپابندی عاید کی تھی مگر حزب اللہ کےسیاسی ونگ کو دہشت گردی کے الزام سے مستثنیٰ قرار دیا تھا۔آسٹریا نے دوسرے یورپی ممالک کے برعکس دوسرے یورپی ممالک نے حزب اللہ کے صرف عسکری ونگ کو دہشت گرد قرار دیا تھا۔

آسٹریا کے وزیر خارجہ الیگزینڈر شیچلنبرگ نے کہا کہ یہ قدم خود اس گروپ کی حقیقت کی عکاسی کرتا ہے ، جو فوجی اور سیاسی بازو میں فرق نہیں کرتا ہے۔

انہوں نے گذشتہ روز "یروشلم باس" کے ذریعہ شائع ہونے والی خبر کے مطابق اسٹریا نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے حزب اللہ کو اسلحے سے پاک کرنے کے مطالبے پر کوئی پیشرفت نہ ہونے پر افسوس کا اظہار کیا۔

یوروپی یونین نے حزب اللہ کے عسکری ونگ کی سرگرمیوں پر پابندی عائد کردی تھی جبکہ تنقید کے باوجود اسے سیاسی ونگ چلانے کی اجازت دی تھی۔

دوسرے یوروپی ممالک جنہوں نے حزب اللہ پر مکمل طور پر پابندی عائد کردی ہے ان میں نیدرلینڈز ، جرمنی ، ایسٹونیا ، جمہوریہ چیک اور سلووینیا شامل ہیں۔

آسٹریلیائی پارلیمنٹ نے کچھ دن پہلے کینبرا حکام پر زور دینا تھا کہ وہ حزب اللہ کےتمام اداروں پر پابندی عاید کرے۔