ملکہ الزبتھ دوم کی یاد میں برطانیہ میں ایک منٹ کی خاموشی کا اہتمام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانوی عوام نے آنجہانی ملکہ الزبتھ دوم کی یاد میں ایک منٹ کی خامشی اختیار کی۔ شہریوں کی اس معاملے میں حوصلہ افزائی کی گئی کہ وہ اس معاملے میں اپنے گھروں کے قریب ترین اور کمیونٹی کی تقریبات میں خاموشی اختیار کر کے ملکہ کو یاد کر سکتے ہیں۔

اس سلسلے میں برطانیہ نے اتوار آٹھ بجے شب کا وقت طے کیا تھا جب برطانوی عوام ایک منٹ کی کاموشی کا اہتمام کیا، تاکہ برطانوی تاریخ میں ملکہ کی طویل ترین خدمات کو یاد کر سکیں۔ پورے برطانیہ میں اس منابست سے خاموشی اختیار کی گئی اور پھر بعض تقریبات میں تالیوں کی گونج سنائی دی۔

وزیر اعظم لز ٹرس نے ایک منٹ کے لیے ڈوننگ سٹریٹ میں ملکہ کی یاد میں ایک منٹ کی خاموشی کا اہتمام کیا ۔ اسی طرح ویسٹ منسٹر ہال میں ملکہ کے آخری لمحات دیکھنے کے لیے موجود شہری بھی رک گئے۔ویسٹ منسٹر کے قرب میں ایک منٹ کی خاموشی کے بعد خوشیوں بھری آوازیں بھی سنی گئیں۔

پورے لندن میں عوام آٹھ بجے شب رک گئے۔ جب بگ بین سے ایک منٹ کی خاموشی اختیار کرنے کے لیے کہا گیا۔ یہ اہتمام ملکہ الزبتھ دوم کی تدفین سے ایک روز پہلے کیا گیا۔ ملکہ کی یاد میں اس ایک منٹ کی خاموشی کو سینٹ اینی سکوائر میں مانچسٹر میں بھی اختیار کیا گیا۔

ملکہ الزبتھ دوم کی تدفین کے لیے آج پیر کا دن مقرر کیا گیا ہے۔ ملکہ کا انتقال 96 سال کی عمر میں آٹھ ستمبر 2022 کو بکنگھم پیلس میں ہوا تھا۔ انہوں نے ستر سال تک ملکہ کے طور پر حکمرانی کی ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں