یونیورسٹی اسرائیل کے ساتھ سرمایہ کاری ختم کرنے پر رضامند

ڈبلن کیمپس میں غزہ کے حق میں احتجاج ختم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

آئرلینڈ کے ممتاز ٹرینیٹی کالج ڈبلن (ٹی سی ڈی) کے طلباء نے بدھ کے روز غزہ میں اسرائیل کے اقدامات کے خلاف پانچ روزہ احتجاج ختم کر دیا جب انہوں نے کہا کہ ان کے مطالبات یونیورسٹی کی قیادت نے قبول کر لیے۔

اپنی ویب سائٹ پر یونیورسٹی نے کہا، "یونیورسٹی کی سینئر انتظامیہ اور مظاہرین کے درمیان کامیاب مذاکرات" کے بعد "ایک معاہدہ طے پا گیا"۔

ادارے کی طلبہ یونین کے صدر لاسزلو مولنرفی نے کہا کہ ٹی سی ڈی کا بیان "زیریں سطح پر طلباء اور عملے کی طاقت کا ثبوت" تھا۔

انہوں نے عوامی نشریاتی ادارے آر ٹی ای کو بتایا کہ کیمپ بدھ کی شام کو ختم کر دیا جائے گا۔

ٹی سی ڈی نے کہا، یونیورسٹی "اسرائیلی کمپنیوں میں سرمایہ کاری سے دستبرداری کا عمل مکمل کرے گی جن کی مقبوضہ فلسطینی علاقے میں سرگرمیاں ہیں اور وہ اس سلسلے میں اقوامِ متحدہ کی بلیک لسٹ میں شامل ہیں"۔

طلباء کارکنان نے جمعہ کے روز احتجاج کا آغاز "فلسطین سے یکجہتی کیمپ" کے طور پر کیا جیسا کہ امریکی کیمپس میں بھی اسی طرح کے مظاہروں کی بازگشت ہے۔

مولنرفی نے ہفتے کے روز کہا کہ احتجاج اس وقت تک جاری رہے گا جب تک یونیورسٹی اسرائیل کے ساتھ اپنے کسی بھی قسم کے تعلقات ختم نہ کر دے۔

درجنوں طلباء نے یونیورسٹی کے ایک مرکزی چوک پر خیمے لگا لیے اور ایک لائبریری کے داخلی راستے کو روکنے کے لیے بینچوں کے ڈھیر لگا دیئے۔ اس لائبریری میں نویں صدی کی مشہورِ زمانہ انجیلِ مخطوطہ بُک آف کیلز موجود ہے۔ لائبریری ڈبلن کا ایک مشہور سیاحتی مقام ہے۔

احتجاج کے دوران سکیورٹی عملے نے کیمپس کے دروازے بند کر دیئے جو عموماً عوام کے لیے کھلے ہوتے ہیں۔

ٹی سی ڈی نے بدھ کے روز کہا، "بُک آف کیلز سے احتجاجی کیمپ اور ناکہ بندی ہٹانے کے ساتھ عملے، طلباء اور عوام کے لیے یونیورسٹی کے معمولات کی طرف واپسی کے منصوبے بنائے جا رہے ہیں۔"

گذشتہ ہفتے یونین کو 214,000 یورو (230,000 ڈالر) کا جرمانہ کیا گیا تھا کیونکہ اس سال طلباء کی فیسوں، کرایہ اور غزہ میں جنگ کے خلاف احتجاج کے بعد سیاحوں سے ملنے والی آمدنی میں کمی آئی تھی۔

فلسطینیوں کے حامی مظاہروں نے ہفتوں سے امریکی کیمپسز کو ہلا کر رکھ دیا ہے جو فرانس اور آسٹریلیا سمیت دیگر ممالک میں پھیل گئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں