.

سلامتی کونسل کی یمن میں حوثی بغاوت کی مذمت

سیاسی قوتوں سے صدر ھادی کی حمایت کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عالمی سلامتی کونسل نے یمن میں اہل تشیع مسلک کے حوثی عسکریت پسندوں کی ملک کی آئینی حکومت کے خلاف بغاوت کی شدید مذمت کرتے ہوئے صدرعبد ربہ منصور ھادی اور وزیراعظم خالد بحاح کی حمایت کی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سلامتی کونسل کی جانب سے جاری ایک بیان میں یمن کی تمام سیاسی قوتوں پر زور دیا گیا ہے کہ وہ ملک میں امن و استحکام کے قیام کی خاطر صدر ھادی کی حمایت کریں۔

سلامتی کونسل کے ارکان نے یمن میں جاری شورش پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اسے ملک کے لیے خطرناک قرار دیا ہے۔ سلامتی کونسل نے یمن میں تمام متحارب فریقین پر زور دیا کہ جنگ بندی کا اعلان کرتے ہوئے امن شراکت کے معاہدے کو عملی شکل دینے کے لیے ٹھوس اقدامات کریں۔

خیال رہے کہ یمن میں کل منگل کو حوثیوں نے بغاوت کر کے ایوان صدر پر قبضہ اور بھاری مقدار میں اسلحہ کے ذخائر لوٹ لیے تھے۔ حوثی تحریک کے سربراہ عبدالملک حوثی نے حکومت کے خلاف بغاوت کو جواز فراہم کرتے ہوئے کہا ہے ان کی بغاوت سیاسی طبقے بالخصوص صدر منصور ھادی کی کرپشن کے خلاف بغاوت ہے۔