.

مملکت میں کرونا ویکسین کی فراہمی اور تیاری کے لیے روس کے ساتھ مفاہمتی یادداشت پر دستخط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں Saudi Chemical کمپنی نے روس کے براہ راست سرمایہ کاری فنڈ RDIF کے ساتھ ایک مفاہمتی یادداشت پر دستخط کیے ہیں۔ اس یادداشت کے تحت کرونا وائرس کی خصوصی ویکسین سعودی عرب میں فراہم کی جائے گی۔

سعودی کیمیکل کا کہنا ہے کہ یادداشت پر عمل درامد کے پہلے مرحلے میں کرونا کی ویکسین کو سعودی عرب میں فراہم اور تقسیم کیا جائے گا۔ اگلے اور دوسرے مرحلے میں ویکسین کی تیاری سے متعلق ٹکنالوجی مملکت منتقل کی جائے گی۔ اس دوران سعودی مقامی افراد کو تربیت دی جائے گی۔

اس یادداشت کے لیے سعودی عرب میں متعلقہ اتھارٹیز کی منظوری لازمی ہو گی جس کے بعد یہ ایک سال کے لیے نافذ العمل ہو گی۔

روس وہ پہلا ملک ہے جس نے کوویڈ – 19 وائرس کے توڑ کے لیے ویکسین پیش کی۔ روس کا کہنا ہے کہ اس ویکسین کو عوام استعمال کریں گے۔

روس میں سرکاری تجربہ گاہ نے اسپوٹنک کے نام سے ویکسین تیار کی۔ بعد ازاں تجربہ گاہ کے ملازمین اور پھر رضاکاروں پر اس ویکسین کو آزمایا گیا۔ ابھی تک اس کے سائیڈ ایفکیٹس کے بارے میں کوئی اطلاع سامنے نہیں آئی ہے۔ روس میں کرونا وائرس کے تقریبا دس لاکھ مصدقہ کیسوں کا اندراج ہو چکا ہے۔ یہ دنیا بھر میں متاثرین کی چوتھی بڑی تعداد ہے۔