لیوسڈ کے علاوہ مزید دو کار ساز کمپنیوں کے ساتھ مذاکرات ہو رہے: سعودی وزیر سرمایہ کار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی وزیر سرمایہ کاری خالد الفالح نے انکشاف کیا کہ الیکٹر کار کمپنی لیوسڈ کے علاوہ مملکت میں کار بنانے والی دو کمپنیوں کے ساتھ جدید بات چیت جاری ہے۔ تفصیلات کا اعلان جلد کیا جائے گا۔

الفالح نے بدھ کے روز صنعت کی قومی حکمت عملی پر ایک مکالمے کے سیشن کے دوران کہا کہ صنعتی شعبہ واحد شعبہ ہے جو اقتصادی ترقی کا مترادف ہے۔ انہوں نے زور دے کر کہا کہ یہ شعبہ بہت اہمیت کا حامل ہے، کیونکہ یہ ممالک کی ترقی کی عکاسی کرتا ہے۔

الفالح نے مزید کہا کہ سرمایہ کاری کی حکمت عملی کا ہدف مقررہ سرمائے کی تشکیل کے لحاظ سے 12 ٹریلین ریال سے زیادہ ہے، انہوں نے واضح کیا کہ اس میں صنعت کا حصہ 1.7 ٹریلین ہے۔

الفالح نے مزید کہا کہ منصوبوں کے فریم ورک میں ایک کھرب ریال کی صنعتی سرمایہ کاری ہے۔

سرمایہ کاری کے وزیر نے زور دیا کہ صنعت سرمایہ دارانہ شعبوں میں سے ایک اہم ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ اس شعبے کی فنانسنگ انڈسٹریل ڈویلپمنٹ فنڈ کے ذریعے کی جاتی ہے جو ایک ممتاز کردار ادا کرتا ہے۔

انہوں نے کہا "ہم صنعتی فنانسنگ میں بینکنگ سیکٹر کے لیے زیادہ سے زیادہ کردار کو فعال کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔ کیونکہ اس شعبے کی فنانسنگ کی حوصلہ افزائی کے لیے مالیاتی شعبے کے پروگرام کے ساتھ بڑی تعداد میں منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں