الاحساء: دُنیا کے سب سے بڑے پام نخلستان میں کھجوروں کی نمائش کا سالانہ میلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی الاحساء گورنری میں دنیا کا سب سے بڑا کھجور کا نخلستان اپنی سالانہ کھجور کا میلہ سجائے ہوئے ہے۔ اس میلے میں عرب خلیجی ممالک کے زائرین کی بڑی تعداد شرکت کررہی ہے۔ الاحساء گورنری سعودی عرب کے تین خلیجی ممالک متحدہ عرب امارات، قطر اور سلطنت عمان کے لیے ایک ’گیٹ وے‘ کا درجہ رکھتی ہے۔ اس کے علاوہ یہ علاقہ زرعی، ثقافتی، تاریخی اور قدرتی لحاظ سے انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

’الاحساء پروسیسڈ ڈیٹس مارکیٹنگ فیسٹیول 2024ء ‘کا یہ نواں ایڈیشن ہے جو خطے میں سیاحت کے شعبے کو فروغ دینے کے لیے ایک معاون میلہ بن چکا ہے۔

یہ میلہ 50 سے زائد اقسام کی کھجوروں کی صنعت کے ہیڈ کوارٹرز کے درمیان مسابقت کی روشنی میں کھجوروں کوایک عوامی زرعی مصنوعات سے عالمی اقتصادی مصنوعات میں تبدیل کر کے کھجور سے نکالے جانے والے عطریات، کھجور کے پتوں سے صحت بخش مشروبات کے علاوہ کھجور سے حاصل کردہ چینی کی گولیاں اورکئی دوسرے تبدیلی کی اختراعات کی نمائش کر رہا ہے۔

فیسٹیول کے جنرل سپروائزر الاحساء کے سکریٹری عصام الملا نے العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ "فیسٹیول نے اپنے اہداف میں الاحساء کے پاس موجود اجزاء اور مواقع کا زیادہ سے زیادہ فائدہ اٹھایا ہے۔اس نے تاریخی ورثے کے تحفظ کے حوالے الاحساء میں کھجور کی اہمیت کو اجاگر کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ "یہ میلہ گذشتہ آٹھ سیشنوں میں کھجور کی مصنوعات تیار کرنے والوں کے درمیان ایک مثبت مسابقت پیدا کرنے میں کامیاب رہا ہے جو کھجور کی مقداری اور معیاری پیداوار اور ان کی پروسیسنگ کی صنعتوں میں ترقی حاصل کرنے میں مدد گار ثابت ہوا۔

انہوں نے وضاحت کی کہ میلے کی مختلف سرگرمیاں کھجور کے درختوں اور کھجوروں میں دلچسپی کے شعبوں کو دلچسپ انداز میں پیش کی جاتی ہیں۔ میلے میں تقریباً 40 دستکاریوں کی شرکت کا مشاہدہ کیا گیا ہے جن میں الاحسا سب سے مشہور ہے۔ اس میں لوک آرٹس پرفارمنس کے علاوہ فیسٹیول کے ہیڈ کوارٹر میں فوڈ ٹرکوں کے لیے جگہ مختص کرنا اور 8,000 سے زیادہ کاروں کو ایڈجسٹ کرنے کے لیے پارکنگ کی جگہ فراہم کرنے کی سہولت فراہم کی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں