سعودی عرب: رمضان میں اعتکاف کی ممانعت، ہوٹل بند وبازار کھلے رہیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب میں متعلقہ اداروں نے ماہ صیام کے دوران اور عید الفطر کے دوران کرونا وبا کے پیش نظر احتیاطی تدابیر اور اقدامات کا اعلان کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کو معلوم ہوا ہے کہ وزارت صحت، وزارت مذہبی امور، وزارت سیاحت، وزارت برائے دیہی امور اور ہاؤسنگ نے وزارت داخلہ کی مشاورت سے ماہ صیام اور عید الفطر کے حوالے سے اہم فیصلے کیے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ متعلقہ اداروں نے ماہ صیام کے دوران اعتکاف کی اجازت نہیں ہو گی جب کہ بوفے بند رہیں گے۔ رمضان افطار پارٹیوں پرپابندی ہوگی۔ مساجد میں بھی اجتماعی افطار پارٹیوں پر پابندی ہو گی۔ البتہ تمام تجارتی اور کاروباری مراکز 24 گھنٹے کھلے رہیں گے۔ بازاروں کو کھلا رکھنے کے ساتھ کرونا وبا سے نمٹنے کے لیے سخت اقدامات کیے جائیں گے۔


ماہ صیام کے دوران سحری کے پروگرامات پر بھی پابندی عاید رہے گی۔ عید کی نماز مساجد کے بجائے کھلے مقامات پر ادا کی جائے گی۔ ماہ صیام کے دوران تمام ہوٹل، بوفے اور ریستوران بند رہیں گے۔ اعتکاف پر پابندی ہوگی۔

حکومت کی طرف سے تمام کاروباری مراکز کو کھلا رکھنے کی اجازت ہوگی۔ کرونا ایس اوپیز پر عمل درآمد یقینی بناتے ہوئے بازاروں کو 24 گھنٹے کھلا رکھا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں