.

مکہ مکرمہ: حج قواعدوضوابط کی خلاف ورزی کے مرتکب 20 افراد پرجرمانے عاید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مکہ مکرمہ میں حج سکیورٹی فورسز نے 20 افراد کوحج کے قواعد وضوابط کی خلاف ورزی پر بیس افراد کو 10 ہزار ریال (2666 ڈالر) فی کس جرمانہ عاید کیا ہے۔

سعودی وزارتِ داخلہ نے حج کے ایام کے دوران میں 17 سے 22جولائی تک کووِڈ-19 کی وبا کو پھیلنے سے روکنے کے لیے ’المسجدالحرام، اس کے اطراف کے مقامات اور مشاعرمقدسہ (منیٰ ، مزدلفہ اور عرفات)میں کسی بھی غیرمجاز شخص کے داخلے پر پابندی عاید کررکھی ہے اور ان مقدس مقامات میں غیرمجازداخل ہونے کی کوشش کرنے والے افراد پر بھاری جرمانہ عاید کیے جارہے ہیں۔

حج سکیورٹی فورسز کے ترجمان بریگیڈیئرجنرل سامی الشویریخ نے تمام سعودی شہریوں اور مکینوں پر زوردیا ہے کہ وہ حج کے لیے جاری کردہ قواعد وضوابط کی پاسداری کریں اور حج کے ایام میں المسجد الحرام یا حج کے دیگر مقامات منیٰ ، عرفات اور مزدلفہ کی طرف جانے کی کوشش نہ کریں،اگر کوئی خلاف ورزی کا مرتکب پایا گیا تو اس کے خلاف سکیورٹی اہلکار فوری کارروائی کریں گے۔

سعودی حکومت نے اس مرتبہ بھی کرونا وائرس کی وبا کے پیش نظر صرف اپنےشہریوں اورمملکت میں مقیم تارکِ وطن مکینوں کوحج کی اجازت دی ہے اور ان میں سے طے شدہ معیارپر پورااُترنے والے 60 ہزار خوش نصیب مناسک حج ادا کررہے ہیں۔2020ء میں بھی کرونا وائرس کی وبا کے پیش نظر صرف 10 ہزار افراد کو فریضہ حج ادا کرنے کی اجازت دی تھی۔