ایران جوہری مذاکرات کے موقع سے فائدہ اٹھائے:صدر اوباما

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی صدر براک اوباما نے ایرانی حکومت پر زوردیا ہے کہ وہ چھے بڑی طاقتوں کے ساتھ جاری جوہری مذاکرات کے موقع سے فائدہ اٹھائے اور ملک کی اقتصادی تنہائی کا خاتمہ کرے۔

براک اوباما نے جمعرات کو ایک بیان میں کہا ہے کہ ''اگر ایران اپنی بین الاقوامی ذمے داریوں کو پورا کرتا ہے تو پھر ہم اس بات سے بخوبی آگاہ ہیں کہ ڈائیلاگ ،اعتماد اور تعاون کا راستہ کہاں جاسکتا ہے''۔

امریکی صدر نے ایران میں نئے سال ''نوروز'' کے آغاز کے موقع پر ایرانیوں کے نام ویڈیو پیغام میں کہا ہے کہ''ایرانیوں کو حالیہ برسوں کے دوران ایرانی لیڈروں کے اپنے خود انتخاب کردہ راستے کی بدولت معاشی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا ہے اور اس وجہ سے آپ کا ملک اور دنیا آپ کی غیر معمولی صلاحیتوں سے فائدہ اٹھانے سے محروم رہ گئی ہے''۔

اوباما کا کہنا تھا کہ ''اگر ایران دنیا کو یہ یقین دلانے کے لیے بامقصد اور قابل تصدیق اقدامات کرتا ہے کہ اس کا جوہری پروگرام پُرامن مقاصد کے لیے ہے تو پھر ایک معاہدے تک پہنچنے کے امکانات ہیں''۔

انھوں نے کہا کہ ''اس سال حقیقی سفارتی پیش رفت سے آیندہ برسوں کے دوران ایرانی عوام کے لیے نئے امکانات اور خوش حالی کے مواقع پیدا ہوسکتے ہیں''۔ان کا اشارہ ایران اور چھے بڑی طاقتوں کے درمیان جوہری مذاکرات کی جانب تھا۔ان مذاکرات کے نتیجے میں گذشتہ سال چھے ماہ کے لیے عبوری معاہدہ طے پایا تھا جس کے نتیجے میں امریکا اور یورپی یونین نے ایران پر عاید کردہ پابندیوں میں نرمی کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں