.

پاسداران انقلاب کا ایران میں ایٹم بم تیاری کا عندیہ

"تیل وگیس کے ذخائر خامنہ ای کی سپاہ کے پیروں تلے ہیں"

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران کے متنازعہ جوہری پروگرام پر تہران اور چھ عالمی طاقتوں کے درمیان معاہدے کے لیے میراتھن مذاکراتی کوششوں کے جُلو میں ایرانی عہدیداروں کی جانب سے بعض ایسے بیانات بھی سامنے آ رہے ہیں جن سے ظاہر ہوتا ہے کہ ایران جوہری بم تیار کرنے کی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق پاسداران انقلاب کے ایک سینئر عہدیدار جنرل محمد رضا نقدی نے دعویٰ کیا ہے کہ "دُنیا کا کوئی ہتھیار ایسا نہیں جو ایران نہ بنا سکتا ہو"۔ ان کا یہ بیان ایک ایسے وقت میں منظر عام پر آیا جب ویانا میں ایرانی حکام اور گروپ 1+5 کے درمیان ایران کے متنازعہ جوہری پروگرام کو محدود کرنے سے متعلق مذاکرات عروج پر تھے۔

پاسداران انقلاب کی مقرب خبر رساں ایجنسی"فارس" کے مطابق جنرل رضا نقدی نے ان خیالات کا اظہار تہران میں ایک تقریب سے خطاب میں کیا۔ انہوں نے اپنی تقریر میں عالمی برادری کی جانب سے جوہری پروگرام کے تسلسل کی پاداش میں اقتصادی پابندیوں کے اثرات کا بھی ذکر کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ عالمی پابندیوں کے باوجود ایران ہر قسم کا اسلحہ بنانے کی پوری صلاحیت رکھتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کا کوئی ہتھیار یا چھوٹا اور بڑا اسلحہ ایسا نہیں جو ہم تیار نہ کر سکتے ہوں۔

خیال رہے کہ ایران کے متنازعہ جوہری پروگرام کے باعث پچھلے کئی سال سے تہران کو عالمی اقتصادی پابندیوں کا سامنا ہے۔ ان پابندیوں کے توڑ یا نرمی لانے کے لیے ایرانی صدر حسن روحانی نے بین الاقوامی برادری کے ساتھ بات چیت کا سلسلہ شروع کیا۔ وہ یہ بات ثابت کرنے کی کوشش کر رہے ہیں کہ تہران کا ایٹمی پروگرام پرامن مقاصد کے لیے ہے۔

وہ جنگی مقاصد کے لیے یورینیم افزودہ نہیں کر رہے ہیں بلکہ توانائی کی ضروریات پوری کرنے کے لیے جوہری پروگرام شروع کیا گیا ہے۔ ان کے بیانات کے برعکس ایرانی پاسداران انقلاب اور حکومت کے بعض دوسرے عہدیدار علانیہ اور غیر علانیہ طریقے سے یہ ثابت کرنے کی کوشش کرتے رہے ہیں کہ ایران جوہری بم بنانے کی طرف بڑھ رہا ہے۔

پاسداران انقلاب کے عہدیدار کا کہنا تھا کہ عالمی پابندیوں کے نتیجے میں ایران کی فوجی سرگرمیوں پرکوئی خاطر خواہ منفی اثرات نہیں پڑے ہیں۔ مسلح افواج نے کئی اہم شعبوں میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔

جنرل محمد علی رضا نقدی نے دھمکی دی کہ اگر عالمی برادری ہماری شرائط پر جوہری معاہدے پرمتفق نہ ہوئی تو ہم دنیا کو تیل کی سپلائی بند کر دیں گے جس کے نتیجے میں بڑے ممالک میں نظام زندگی بھی مفلوج ہو کر رہ جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر میں تیل اور گیس کے سب سے زیادہ ذخائر سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کی فوج کے قدموں تلے پائے جاتے ہیں۔