.

شام میں بیس ہزار غیر ملکی جنگجو موجود!!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی حکام نے ایک حالیہ رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ 20 ہزار 90 غیر ملکی جنگجو لڑائی میں حصہ لینے کے لیے شام پہنچ چکے ہیں۔ غیر ملکی جنگجوئوں کی کم وقت میں اتنی بڑی تعداد کی شام آمد کا یہ غیر معمولی اور نہایت اہم واقعہ ہے۔

خبر رساں ادارے"اے ایف پی" کے مطابق کانگریس کے سامنے پیش کیے گئے اعدادو شمار میں‌ بتایا گیا ہے کہ دوسرے ممالک سے اب بھی بڑی تعداد میں جنگجو شام پہنچ رہے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق امریکی کانگریس کے سامنے پیش کردہ اعدادو شمار اس سے قبل انسداد دہشت گردی حکام کی جانب سے سامنے بتائی گئی تعداد سے قدرے زیادہ ہے۔ اس سے قبل سامنے آنے والے اعداد وشمار میں بتایا گیا تھا کہ 19 ہزار غیر ملکی جنگجو شام کے محاذ جنگ پر موجود ہیں۔

امریکی ایوان نمائندگان کی داخلی سلامتی کمیٹی کے اجلاس میں انسداد دہشت گردی کے قومی مرکز کے ڈائریکٹر نیکولاس راسموسن نے اپنا ایک تحریری بیان پیش کیا جس میں بتایا گیا کہ شام میں غیر ملکی جنگجوئوں کی تعداد میں غیر معمولی اضافہ ہو چکا ہے۔ انہوں نے شام کے محاذ جنگ کا تقابل دوسرے جنگی محاذوں افغانستان، پاکستان، عراق، یمن اور صومالیہ کے ساتھ کرتے ہوئے لکھا کہ ان ملکوں‌ کی نسبت شام میں‌غیر معمولی تعداد میں‌ غیر ملکی جنگجو پہنچ رہے ہیں۔

راسموسن کا کہنا تھا کہ شام کے محاذ جنگ پر پہچنے والوں میں ‌3400 مغربی ممالک کے جنگجو اور 150 امریکی بھی شامل ہیں۔