.

عرب اتحاد ی افواج کی تازہ کمک یمن کے ساحلی شہر الحدیدہ کے نواح میں پہنچ گئی

الحدیدہ کی بندرگاہ کو حوثی باغیوں سے واگزار کرانے کے لیے فیصلہ کن حملے کی تیاری جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عرب اتحادی فوج کی تازہ کمک یمن کے مغربی ساحلی شہر الحدیدہ میں پہنچ گئی ہے جہاں یمن کی قومی فوج حوثی شیعہ باغیوں کے خلاف نبرد آزما ہے اور ان سے الحدیدہ کی بندرگاہ کا قبضہ واپس لینے کے لیے فیصلہ کن حملے کی تیاری کررہی ہے۔

عرب اتحادی فوج کے ذرائع نے اتوار کے روز بتایا ہے کہ یمن میں موجود سوڈانی فورسز کے ایک یونٹ کو الحدیدہ میں اتحادی فوج کے کنٹرول والے علاقے میں منتقل کیا گیا ہے ۔وہ حوثی باغیوں کے زیر قبضہ الحدیدہ کے علاقوں کو واگزار کرانے کے لیے یمنی فوج کے ساتھ مل کر کارروائی کرے گا۔

عسکری ذرائع کے مطابق کمک میں سوڈان کے جدید اسلحے اور آلات سے لیس دستے شامل ہیں اور وہ الحدیدہ شہر کے جنوبی محاذ اور مشرقی داخلی راستے میں جاری لڑائی میں حصہ لیں گے۔ عرب اتحادی فوج کی ایک ایلیٹ فورس کے اضافی یونٹ بھی وہاں پہلے سے برسرپیکار فوجیوں کی مدد کے لیے بھیجے گئے ہیں۔

یمنی فوج اور عرب اتحادی فوج کے دستے الحدیدہ کے علاقے الدرہیمی الشرقی میں فارموں اور جنگلوں میں حوثی ملیشیا کی چوکیوں ، خفیہ کمین گاہوں کا سراغ لگا رہے ہیں اور ان کا گھیراؤ کررہے ہیں۔

دریں اثناء عرب اتحاد نے الحدیدہ شہر کے مکینوں بالخصوص اس شہر سے دارالحکومت صنعاء کے درمیان واقع مرکزی شاہراہ پر سفر کرنے والے مسافروں کو خبردار کیا ہے کہ وہ اپنے تحفظ کو یقینی بنانے کے لیے اس علاقے سے دور رہیں تا کہ وہ حوثی ملیشیا کی بلا امتیاز گولہ باری کی زد میں آنے سے بچ سکیں۔

عرب اتحادی افواج کے میڈیا سنٹر نے الحدیدہ شہر کے جنوب اورمشرق میں واقع علاقوں کے مکینوں میں یک ورقی پرچے اور ان کے ساتھ نقشے تقسیم کیے ہیں۔ان میں مقامی آبادی کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ نقشے میں نشان زد کیے گئے علاقوں سے دور رہیں۔ اتحاد نے الحدیدہ کے مکینوں کو بھی خبردار کیا ہے کہ وہ ایران نواز ملیشیا کے ساتھ کسی قسم کا تعاون نہ کریں اور ن کے خلاف لڑائی میں یمن کی قانونی حکومت کے زیر ِکمان فوج کا ساتھ دیں۔