.

سعودی عرب :عمرہ زائرین کے لیے اب تک 13 لاکھ سے زیادہ ویزوں کا اجرا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت حج اور عمرہ کے فراہم کردہ اعداد وشمار کے مطابق ہجری سال کے آغاز کے بعد سے عمرہ کی ادائی کے لیے حجازِ مقدس میں پہنچے والے عازمین کی تعداد 1318605 ہوچکی ہے۔

ان سرکاری اعداد وشمار کے مطابق سعودی عرب میں عمرہ ادا کرنے کے لیے اب تک دس لاکھ سے زیادہ عازمین داخل ہوئے ہیں۔اس سے پہلے مملکت میں موجود عازمین کی تعداد 362225 تھی ،ان میں سے مکہ میں موجود عازمین کی تعداد 242638 تھی۔

قبل ازیں 677000 زائرین عمرہ ادا کرنے کے بعد سعودی عرب سے واپس اپنے آبائی ممالک میں جاچکے ہیں۔سرکاری اعداد وشمار کے مطابق 7941 سعودی ملازمین کمپنیوں اور اداروں میں عمرہ کی خدمات کے سلسلے میں کام کررہے ہیں اور ان میں خواتین کی تعداد 1239 ہے۔

سعودی عرب کی وزارتِ حج وعمرہ نے رواں ہجری سال کے آغاز پر ہفت وار عمرہ کوائف نامے ( انڈیکس) کا اجرا کیا تھا ۔اس کے تحت عمرے کے لیے جاری کردہ ویزوں کی تعداد ، سعودی عرب میں برّی، فضائی اور بحری راستے سے داخل ہونے والے عازمین کی تعداد، ان میں سے مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں موجود زائرین اور عمرے کی ادائی کے بعد لوٹ جانے والے زائرین کی تعداد کے بارے میں تفصیل جاری کی جاتی ہے۔

رواں عمرہ سیزن کے دوران میں اب تک پاکستان سے سب سے زیادہ تعداد میں زائرین عمرے کی ادائی کے لیے سعودی عرب گئے ہیں۔ گذشتہ تین ماہ کے دوران میں ان کی تعداد 359000 تک پہنچ چکی ہے۔اس کے بعد انڈونیشیا 204176 زائرین کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے ۔بھارت تیسرے نمبر پر ہے اور وہاں سے عمرے کے لیے سعودی عرب جانے والے زائرین کی تعداد 178893 ہوچکی ہے۔

ہفتہ وار کوائف نامے کے اجرا کا مقصد زائرین اور عازمین عمرہ کو مہیا کی جانے والی خدمات کے معیار کو بہتر بنانا ہے۔اس کو سعودی عرب کے ویژن 2030ء کی روشنی میں وضع کیا گیا ہے۔اس ویژن کے تحت سالانہ عازمین عمرہ کی تعداد تین کروڑ تک پہنچائی جائے گی اور انھیں اعلیٰ معیار کی خدمات مہیا کی جائیں گی۔