جوہری ڈیل سے ایرانیوں کی دہشت گردی اور تخریبی کردار کو تقویت ملی : مائیک پومپیو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ ایران کے ساتھ جوہری ڈیل کے دوران میں تمام بری چیزیں ہوئی ہیں،دہشت گردی اور ایرانیوں کے تخریبی کردار میں اضافہ ہوا ہے۔

انھوں نے سی این بی سی سے منگل کے روز ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ’’ایرانیوں کے حوثیوں سے حزب اللہ تک تخریبی کردار ، میزائل داغنے کی صلاحیت اور سخت گیری میں ا ضافہ ہوا ہے۔یہ سب کچھ تب ہوا ہے جب ہم مشترکہ جامع لائحہ عمل ( جوہری سمجھوتے) کا حصہ تھے ۔ صدر ڈونلڈ ٹرمپ اسلامی جمہوریہ ایران کے اس کردار میں تبدیلی لانے کے لیے پُرعزم ہیں‘‘۔

مائیک پومپیو نے کہا کہ ایران کے حوالے سے یورپی شراکت دار امریکا کے اہم اتحادی ہیں۔جب ہم دہشت گردی کے خطرے اور عدم استحکام کی بات کرتے ہیں اور ہم حزب اللہ ، حوثیوں اور ایرانی کنٹرول میں عراقی ملیشیاؤں سے درپیش خطرے کو سمجھتے ہیں اور وہ عراقی حکومت کے کنٹرول میں نہیں ہیں تو میرے خیال میں یورپی بھی ان خطرات کو سمجھتے ہیں اور انھیں بھی ہماری طرح تشویش لاحق ہے‘‘۔

انھوں نے عراق کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وہ عراقیوں کو ان کی ضرورت کے مطابق مدد دینا چاہتے ہیں۔داعش بدستور عراق میں موجود ہیں۔وہاں برسرزمین ہماری فورسز موجود ہیں اور عراقی سکیورٹی فورسز کو پاؤں پر کھڑا ہونے میں مدد دے رہی ہیں تاکہ وہ اپنی تعمیرِ نو کرسکیں اور داعش کے خطرے کو دور رکھ سکیں‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں