.

لیبیا نے انتہائی مطلوب خطرناک دہشت گرد مصر کے حوالے کر دیا

مطلوب دہشت گرد سے نامعلوم مقام پر تفتیش کا آغاز، مقدمہ فوجی عدالت میں چلے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر سے موصولہ اطلاعات کے مطابق لیبیا کی قومی فوج نے خطرناک دہشت گرد ھشام عشماوی کو منگل کی شب مصر کے حوالے کر دیا ہے۔ مصری حکام نے عشماوی سے نامعلوم مقام پر تفتیش کا آغاز کر دیا ہے جس کے اختتام پر اس کے خلاف فوجی عدالت میں مقدمہ چلایا جائے گا۔

عشماوی مصر کی سپیشل فورسز کا بھگوڑا افسر ہے۔ وہ گذشتہ برس لیبیا کے شہر درنہ میں دیکھا گیا تھا۔ مصری حکومت ایک مدت سے اس کے تعاقب میں تھی۔ ھشام عشماوی مصر میں قبطی عیسائیوں، سیناء کے علاقے میں پولیس اور فوجیوں کے خلاف ہلاکت خیز حملوں اور متعدد دہشت گردی کارروائیوں میں مطلوب تھا۔

اس سلسلے میں مصر کے محکمہ سراغرسانی کے سربراہ میجر جنرل عباس کامل منگل کی شام لیبیا گئے جہاں انھوں نے لیبیا کے قومی فوج کے کمان دار فیلڈ مارشل خلیفہ حفتر سے ملاقات کی۔

’’العربیہ‘‘ ذرائع کے مطابق اس موقع پر بدنام زمانہ دہشت گرد ھشام عشماوی کو مصری محکمہ انٹلیجنس کے سربراہ کے حوالے کیا گیا، جہاں سے وہ اسے راتوں رات لے کر مصر واپس لوٹ آئے۔

عباس کامل اور ھشام عشماوی کو جس طیارے میں مصر لایا گیا اسے لڑاکا طیارے نے اپنے حفاظتی حصار میں لے رکھا تھا۔ اس طیارے میں مصر کے سپیشل سروسز گروپ کے اہلکار سوار تھے۔

دہشت گرد عشماوی کو ایک ویڈیو کلپ میں لڑاکا طیارے سے باہر نکلتے دیکھا جا سکتا ہے۔ ان کی آنکھوں پر پٹی بندھی ہوئی تھی جبکہ مصری سپیشل سروسز گروپ کے اہلکاروں نے انہیں حصار میں لے رکھا تھا۔

ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ لیبی فوج نے عشماوی کے ہمراہ متعدد دوسرے اہم مطلوب دہشت گردوں کو بھی مصر کے حوالے کیا ہے۔

فیلڈ مارشل حفتر نے مصری انٹلیجنس کے سربراہ عباس کامل سے ملاقات میں کہا کہ مصر اور لیبیا کے درمیان مضبوط تعلقات ہیں۔ مصری انٹلیجنس عہدیدار نے انہیں تازہ ترین صورت حال سے بھی آگاہ کیا۔

مصری صدر کی مبارکباد

مصر کے صدر عبدالفتاح السیسی نے دہشت گرد ھشام عشماوی کی لیبیا سے گرفتاری پر محکمہ سراغرسانی اور سپیشل فورسز کے عہدیداروں کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف ہماری جنگ ختم نہیں ہوئی اور ہمارے تمام شہداء کے خون کا بدلہ لینے تک یہ جاری رہے گی۔

اپنے ٹویٹر پیغام میں السیسی نے تھنڈر فورس کے اہلکاروں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے بہادر اور دلیر جوان ملک کی حرمت پر کوئی آنچ نہیں دیتے۔