.

امریکا: داعش میں شمولیت کی کوشش، اردنی باشندے کو 15 سال کی جیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا میں مقیم ایک اردنی باشندے کو داعش تنظیم میں شمولیت کی کوشش کرنے کے الزام میں 15 سال جیل کی سزا سنائی گئی ہے۔

جمعرات کے روز اوہایو کی عدالت کے جج نے 28 سالہ لید ولید العبینی کے خلاف فیصلہ جاری کیا۔ فیصلے کے مطابق سزا مکمل ہونے کے بعد اردنی باشندے کو 25 برس زیر نگرانی رکھنے کا بھی کہا گیا ہے۔ تاہم غالب گمان ہے کہ العبینی کی سزا پوری ہونے پر اسے ملک سے بے دخل کر دیا جائے گا۔

العبینی کو 2017 میں کینٹکی کے شمال میں سینسینیٹی انٹرنیشنل ایئرپورٹ سے گرفتار کیا گیا تھا۔ استغاثہ کے مطابق اس نے شام میں داعش تنظیم کے جنگجوؤں میں شمولیت اختیار کرنے سے قبل فضائی راستے سے ترکی یا اردن کا رخ کرنے کی کوشش کی۔

اردنی باشندے پر سازش کرنے اور ایک غیر ملکی دہشت گرد تنظیم کو سپورٹ پیش کرنے کے الزامات عائد کیے گئے۔ وفاقی حکام کا کہنا ہے کہ العبینی خود کش بم بار بننے کا خواہش مند تھا۔

مقدمے کے دوران العبینی نے جج کو باور کرایا کہ وہ ہمیشہ سے دہشت گردی کا مخالف رہا ہے اور اس نے امریکی عوام کو نقصان پہنچانے کے بارے میں کبھی نہیں سوچا۔