.

برطانوی عوام بریگزٹ پر بگ بین کی آواز سننے کے واسطے 6.5 لاکھ ڈالر ادا کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

آج سے دو ہفتے بعد 31 جنوری کی شب جب گھڑی 12 بجائے گی تو اس کے ایک سیکنڈ بعد ہی برطانیہ یورپی یونین سے علاحدہ ہو چکا ہو گا۔ برطانوی عوام کی چاہت ہے کہ اس تاریخی لمحے کو بھرپور انداز سے منا کر اس کی گونج دنیا کے کانوں تک پہنچا دی جائے۔

اس سلسلے میں برطانوی عوام کی چاہت ہے کہ وہ بریگزٹ کے اطلاق کے موقع پر لندن میں پارلیمنٹ کی عمارت کے ساتھ واقع تاریخی اور مشہور گھڑی بگ بَین کے گھٹنے کی آواز سنیں جو کہ Bong کے نام سے جانی جاتی ہے۔

مسئلہ یہ ہے کہ دنیا کی یہ مشہور ترین گھڑی مرمت اور دیکھ بھال کی غرض سے 2017 کے وسط سے بند ہے۔ مرمت کا کام 2021 میں مکمل ہو گا۔ اس گھڑی میں لگی گھنٹی کا وزن 14 ٹن ہے جس کے بجنے سے "بونگ" کی آواز سنائی دیتی ہے۔ برطانوی عوام کی خواہش ہے کہ یورپی یونین میں موجودگی کے آخری 10 سیکنڈوں کے دوران انہیں بونگ کی مدھر آواز سنائی دے۔ برطانیہ 1975 میں یورپی یونین میں شامل ہوا تھا اور جون 2016 میں ایک ریفرینڈم کے ذریعے اس نے اس اتحاد سے نکل جانے کا فیصلہ کیا۔ اب اس فیصلے پر عمل درامد کا وقت آن پہنچا ہے۔

برطانوی عوام کو اس مسئلے کا جلد حل یہ نظر آیا کہ ان کی خواہش پوری ہونے کے لیے 5 لاکھ برطانوی پاؤنڈ یعنی 6.5 لاکھ امریکی ڈالر درکار ہیں تا کہ بگ بین کی گھنٹی پر سے مچان کو ہٹایا جا سکے اور ایک عارضی نیا فرش تعمیر کیا جا سکے۔ اس طرح 10 سیکنڈ کے لیے Bong کی آواز سننا ممکن ہو سکے گا۔ اس مقصد کے لیے عوامی چندے کی مہم کا آغاز کیا گیا اور پہلے روز ہی 1.3 لاکھ کے مساوی عطیات جمع کر لیے گئے۔

دیکھنا یہ ہے کہ آیا برطانوی عوام اپنی اس چندہ مہم کے ذریعے تاریخی لمحے کو یادگار بنانے کی خواہش پوری کر سکیں گے یا نہیں !