.
جوہری ایران

ایران کو امریکی مفادات کے خلاف ڈرون طیارے استعمال نہیں کرنے دیں گے: بائیڈن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدر جو بائیدن کا کہنا ہے کہ "ہم اپنے مفادات کے خلاف ڈرون حملوں سمیت ایران کے اقدامات کا جواب دیں گے"۔

انہوں نے یہ بات اتوار کی شام روم میں"G20" کے سربراہ اجلاس کے اختتام پر منعقد ایک پریس کانفرنس میں کہی۔ امریکی صدر کے مطابق جوہری معاہدے کی بحالی ایران کے تصرفات کے ساتھ مربوط ہے۔ انہوں نے باور کرایا کہ "سمجھوتے کی طرف نہ لوٹنے کی صورت میں ایران کو اقتصادی قیمت چکانا پڑے گی"۔

جو بائیڈن نے بتایا کہ ہفتے کے روز ہونے والی ملاقات میں ان کے اور برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن، فرانسیسی صدر عمانوئل ماکروں اور جرمن چانسلر اینگلا میرکل کے بیچ اس بات پر اتفاق رائے ہوا کہ " ایران کو جوہری ہتھیاروں کے حصول سے روکنے کے واسطے سفارت کاری بہترین راستہ ہے"۔

امریکا یہ الزام عائد کرتا ہے کہ عراق میں امریکی افواج پر ہونے والے ڈرون طیاروں کے حملوں کے پیچھے ایران کا ہاتھ ہے۔ یہ حملے تہران نواز عراقی مسلح گروپ کرتے ہیں۔