واشنگٹن: چھاتا برداروں کے اتارے جانے سے کانگریس کمپاؤنڈ میں خوف و ہراس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی دارالحکومت واشنگٹن میں ایک بیس بال میچ کے دوران میں عسکری طیارے کے ذریعے چھاتا بردار فوجیوں کو اتارے جانے کے نتیجے میں کھیل کا میدان خالی کرا لیا گیا۔ پولیس کے مطابق یہ اقدام کانگریس کے کمپاؤنڈ 'کیپیٹول' میں سیکورٹی وارننگ کے باعث کیا گیا۔

امریکی ایوان نمائندگان کی اسپیکر نینسی پلوسی نے مذکورہ سیکورٹی وارننگ کو وفاقی ہوابازی کی انتظامیہ کی جانب سے ایک "فاش اور خوف ناک غلطی" قرار دیا۔ اس لیے کہ انتظامیہ نے کانگریس کمپاؤنڈ کی پولیس کو چھاتا برداروں کے اتارے جانے کے بارے میں آگاہ نہیں کیا۔ پلوسی کے مطابق کانگریس اس واقعے کا جائزہ لے گی تا کہ واقع ہونے والے خلل کا تعین کیا جا سکے۔

خاتون اسپیکر نے بدھ کی شام اپنے بیان میں کہا کہ اس واضح غفلت کے نتیجے میں جنم لینے والے غیر ضروری خوف اور سراسیمگی نے خاص طور پر اداروں کے ارکان ، ملازمین اور کارکنان کو شدید متاثر کیا۔

واضح رہے کہ کانگریس کمپاؤنڈ کی پولیس نے پہلے پہل یہ بتایا تھا کہ وہ ایک طیارے کا تعاقب کر رہی ہے جو کمپاؤنڈ کے لیے ممکنہ طور پر خطرہ بن سکتا ہے۔ اس کے کچھ منٹوں کے بعد یہ پولیس نے اعلان کیا کہ کوئی خطرہ نہیں ہے۔ اس دوران میں کانگریس کی عمارت کو خالی کرا لیا گیا تھا۔

بعد ازاں بتایا گیا کہ یہ ایک فوجی طیارہ ہے اور وہ امریکی فوج کے زیر انتظام چھاتا برداروں کی ٹیم گولڈن نائٹس کے ارکان کو منتقل کر رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں