دبئی کی الامارات اور یونائیٹڈایئرلائنز کے درمیان کوڈ شیئرمعاہدے کا جلد اعلان متوقع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یونائیٹڈ ایئرلائنز اور دبئی کی ملکیتی فضائی کمپنی الامارات کے درمیان کوڈ شیئرکا معاہدہ تیار ہے اور وہ اس کا آنے والے ہفتوں میں اعلان کرنے والی ہیں۔

امریکا کی ملکیتی فضائی کمپنی یونائیٹڈ نے منگل کو واشنگٹن میں چیف ایگزیکٹو اسکاٹ کربی اور الامارات کے صدر ٹم کلارک کے ساتھ 14 ستمبر کو ایک ’’خصوصی تقریب‘‘میں شرکت کا صحافیوں کو دعوت نامہ بھیجا ہے۔اس کا عنوان تھا:’’آئیں ہمارے ساتھ اُڑیں‘‘۔

ایئرکرنٹ نے اس سے پہلے متوقع اعلان کی اطلاع دی تھی۔الامارات کے ترجمان نے تصدیق کی ہے کہ دونوں فضائی کمپنیاں 14 ستمبر کو واشنگٹن میں ’’مشترکہ اعلان‘‘کریں گی۔تاہم ترجمان نے اس کی مزید کوئی تفصیل نہیں بتائی۔یونائیٹڈ نے بھی الگ سے کوئی بیان جاری نہیں کیا۔

حکومتی منظوری کے بعد، ایک کوڈ شیئردونوں ایئر لائنز کے صارفین کو اضافی مقامات تک رسائی کی اجازت دے گا۔فی الوقت ان کے صارفین کو ایسی کوئی سہولت حاصل نہیں ہے۔

امکان ہے کہ اس معاہدے سے امریکی فضائی کمپنی کو خلیجی خطے میں پرواز کرنے والے صارفین کے لیے بہتر مقابلہ کرنے میں مدد ملے گی۔

جون میں امریکن ایئرلائنز اورقطر ایئرویز نے کہا تھا کہ وہ 2020 کے اوائل میں اعلان کردہ تزویراتی اتحاد کوایک نئے کوڈ شیئرمعاہدے کے ساتھ وسعت دے رہی ہیں۔اس کے تحت معاہدے کو 16 مزیدممالک تک توسیع دی جا رہی ہے۔

امریکن ائیرلائنز نے کہا تھا کہ اس معاہدے سے وہ خطہ خلیج میں خدمات مہیا کرنے والی واحد امریکی فضائی کمپنی ہوگی اور وہ دوحہ کے ذریعے قطرایئرویز کے ساتھ بلاروک ٹوک اشتراک پیدا کرے گی۔

سنہ 2015ء میں اپنی فضائی سروس شروع کرنے والی سب سے بڑے امریکی فضائی کمپنی کا مؤقف تھا کہ ان کے خلیجی حریفوں کو ان کی حکومتوں کی جانب سے غیرمنصفانہ طورپرسبسڈی(زرتلافی) دی جا رہی ہے۔اس سے مسابقت کو مسخ کیا جارہا ہے اور امریکی ملازمتوں کو نقصان پہنچایا جارہا ہے لیکن خلیج کی فضائی کمپنیوں نے اس دعوے کی سختی سے تردید کی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں