آرمینیا پڑوسی آذربائیجان کے ساتھ حالیہ جھڑپوں کا ذمہ دار ہے:ترک صدرایردوآن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے آرمینیا کو آذربائیجان کے ساتھ متنازع علاقے نگورنو قراباخ پر 2020 کی جنگ کے بعد ہونے والی حالیہ مہلک ترین جھڑپوں کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔

آرمینیا نے بدھ کے روز کہا ہے کہ آذربائیجان کی افواج سرحدی جھڑپوں کے بعد اس کے 10 مربع کلومیٹر (قریباً چارمربع میل) علاقے پر قابض ہوگئی ہیں۔لڑائی میں دونوں اطراف کے درجنوں فوجی ہلاک ہو چکے ہیں۔

ترکی کے آذربائیجان کے ساتھ قریبی تعلقات استوار ہیں جبکہ آرمینیا کے ساتھ تاریخی طورپرپہلی عالمی جنگ کے بعد سے اس کے تعلقات خراب رہے ہیں مگراس کے باوجود اس وقت وہ ایک اہم علاقائی طاقت ہے۔

صدرایردوآن نے آرمینیا پرروس کی ثالثی میں طے شدہ معاہدے کی غیرمتعیّن خلاف ورزیوں اور تازہ ترین اشتعال انگیزی کا الزام عاید کیا ہے۔اس معاہدے کے نتیجے میں 2020 میں آرمینیا اور آذربائیجان کے درمیان محدود پیمانے پر جنگ کا خاتمہ ہوا تھا اورآذربائیجان کو 1990 کی دہائی کی جنگ میں کھوئے گئے نگورنوقراباخ کے بڑے حصے پر قبضہ کرنے کی اجازت مل گئی تھی۔

صدرایردوآن نے ایک عوامی ریلی میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’ہمارے لیے یہ صورت حال بالکل ناقابل قبول ہے اور یہ آرمینیا کی جانب سے آذربائیجان کی فتح کے ساتھ جنگ ختم ہونے کے بعد طے شدہ معاہدے کی خلاف ورزیوں کا نتیجہ ہے‘‘۔

انھوں نے کہا کہ اس صورت حال کے یقیناً نتائج آرمینیا پرمرتب ہوں گے جس نے معاہدے کی شرائط پوری نہیں کیں اور مسلسل جارحانہ رویّے کا مظاہرہ کیا۔

آرمینیا نے تازہ جھڑپوں میں اپنے 100 سے زیادہ فوجیوں کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور آذربائیجان میں 50 ہلاکتوں کی اطلاع ملی ہے۔متحارب فورسز کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ جاری ہے اور ہلاکتوں کی تعداد مزید بڑھ سکتی ہے۔

واضح رہے کہ ترکی آذربائیجان کوہتھیارمہیا کرنے والا اہم ملک ہے اور سفارتی محاذ پراس کے مؤقف کا حامی ہے۔ تشدد کے ان تازہ واقعات سے ترکی اور آرمینیا کے درمیان مفاہمتی سمجھوتے کی نوزائیدہ کوششیں سبوتاژ ہونے کا خدشہ ہے۔اس مجوزہ سمجھوتے سے پڑوسی ریاستوں کے درمیان تجارت اوردوطرفہ اسفارکو تقویت مل سکتی ہے۔

دریں اثناء معلوم ہوا ہے کہ طیب ایردوآن آیندہ جمعہ کو ازبکستان میں علاقائی سربراہ اجلاس میں روسی صدر ولادی میرپوتین سے ملاقات کریں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں