یوکرینی صدرزیلنسکی کی مودی سے ٹیلی فون پربات چیت،امن فارمولاپربھارت کی مدد کے طالب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یوکرین کے صدرولودی میرزیلنسکی نے پیر کے روز بھارتی وزیراعظم نریندرمودی سے ٹیلی فون پر بات چیت کی ہے اور ان سے یوکرین میں’’امن فارمولے‘‘کے نفاذمیں بھارت کی مدد طلب کی ہے۔

زیلنسکی نے ٹویٹرپرلکھاکہ ’’میں نے وزیراعظم نریندرمودی سے فون پربات کی اور جی 20 کی کامیاب صدارت کے لیے نیک تمناؤں کا اظہارکیا ہے۔ اسی پلیٹ فارم پرمیں نے امن فارمولے کا اعلان کیا تھا اوراب میں اس پر عمل درآمد میں بھارت کی شرکت پربھروساکرتاہوں‘‘۔

اس سے قبل یوکرین نے روس کواقوام متحدہ سے مکمل طور پرنکالنے کا مطالبہ کیا ہے جہاں ماسکو سلامتی کونسل کے مستقل رکن کی حیثیت سے کسی بھی قرارداد کو ویٹو کرسکتا ہے۔

کیف میں وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا:’’یوکرین اقوام متحدہ کے رکن ممالک سے یہ مطالبہ کرتاہے،روسی فیڈریشن کواقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے مستقل رکن کی حیثیت سے محروم کیا جائے اوراسے مجموعی طورپراقوام متحدہ سے خارج کیا جائے‘‘۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ روس سنہ1991ء میں سوویت یونین کے ٹوٹنے کے بعدسے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں یو ایس ایس آرکی نشست پرغیرقانونی طور پرقابض ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں