موجودہ حکومت ڈیڑھ ماہ کی سابق برطانوی وزیراعظم لزٹرس کا پیچھا کیوں کررہی ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سابق برطانوی وزیر اعظم لز ٹرس جو گزشتہ سال عہدے سے ہٹائے سے قبل صرف 45 دن تک سربراہ حکومت رہی ہیں آج کل ایک اسکینڈل کی زد میں ہے۔

لزٹرس کے خلاف مقدمہ چلایا جا رہا ہے جس کے سابق وزیر اعظم کے خلاف ایک ایسے سکینڈل میں تبدیل ہونے کی توقع ہے جسے حل نہیں کیا گیا تو یہ حکمران کنزرویٹو پارٹی کو پریشان کر سکتا ہے۔

گذشتہ گھنٹوں کے دوران برطانوی پریس میں جو تفصیلات شائع ہوئیں وہ العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطالعے سے گذری ہیں۔ متعدد ذرائع سے اکٹھی کی گئی معلومات سے معلوم ہوا کہ ٹرس نے صرف چھ ہفتے سے بھی کم عرصے کے دوران اپنے دور حکومت میں ایک سرکاری گھر استعمال کیا تھا۔ پھر وہ گھر چھوڑ گئیں۔انتظامیہ اس بات پرحیران ہے کہ لزٹرس کے زیراستعمال فلیٹ میں موجود کچھ سامان جس میں تولیے اور گھرکےاندر استعمال ہونے والے جوتے شامل ہیں غائب ہیں۔

گورنمنٹ ہاؤس کے انچارجز نے گمشدہ اشیاء کی قیمت کے لیے ایک رسید بھیجی جس کی تخمینہ قیمت 12,000 پاؤنڈ (15,000 امریکی ڈالر) تھی، لیکن ٹرس نے رقم ادا کرنے سے انکار کر دیا جس پر سرکاری گھروں کی منتظم اتھارٹی اور ٹرس کے درمیان درمیان جھگڑا ہوا۔

حکومت نے مبینہ طور پر سابق وزیر اعظم کو بتایا کہ وہ ان اخراجات کے لیے ذمہ دار ہیں۔ ٹرس اور ان کے ساتھیوں نے گھر میں جو کھانے اور شراب استعمال کی وہ ان کے ریاست سے متعلقہ مقاصد کے دائرہ سے باہر ہیں۔

ٹرس کے ترجمان نے ’ڈیلی میل‘ کو بتایا کہ انہوں نے اس بل پر اختلاف کیا اور کہا کہ میں نے کسی بھی رقم کی ادائیگی پر راضی ہونے سے پہلے ایک "درست بل" طلب کیا تھا۔

ایک ذریعے نے اخبار کو بتایا کہ "لز نے گھر کو آفس نمبر 10 (وزیراعظم کے سرکاری دفتر) کے لیے ایک چھوٹے گھر کے طور پر استعمال کیا۔اس میں وہ اپنے قریبی حلقے سے ملاقاتیں کرتی تھیں جو اکثر شام کو پارٹیوں میں بدل جاتی تھیں۔"

انہوں نے مزید کہا کہ "کابینہ کے دفتر نے اس خیال پر اعتراض کیا ہے کہ ٹیکس دہندگان کو بنیادی طور پر موسم گرما کی پارٹیوں کی ایک سیریز کے لیے بل ادا کرنا چاہیے۔ ان کا کہنا ہے کہ اس کے لیے 12,000 پاؤنڈز سے زیادہ واجب الادا ہیں۔"

پچھلے سال دسمبر میں اخبار ’دی گارڈین‘ نے اطلاع دی تھی کہ گھر میں کوکین کے آثار ملے ہیں، جسے ٹرس نے "صاف غلط" قرار دیتے ہوئے اس کی تردید کی تھی۔

سابق وزیر اعظم کے حوالے کیے جانے والے حالیہ اخراجات کا جواب دیتےہوئے ایک ترجمان نے کہا کہ "لز نے ہمیشہ اپنے ذاتی مہمانوں کے لیے ادائیگی کی ہے۔"

تازہ ترین بل میں ذاتی طور پر اٹھنے والے اخراجات اور سرکاری ملازمین بہ شمول کابینہ سیکرٹری سائمن چیس اور دیگر محکموں کے اعلیٰ حکام کے ساتھ سرکاری کاروبار کے اخراجات شامل ہیں جو اس اقدام کی تیاریوں کے دوران گھر پر ملے تھے۔

لِز ٹرس نے گذشتہ سال ستمبر اور اکتوبر کے درمیان صرف 45 دنوں کے لیے برطانیہ میں وزیرِ اعظم کے عہدے پر فائز رہیں جو برطانوی تاریخ میں سب سے کم عرصے تک رہنے والی وزیرِ اعظم ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں