سابق برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن نے پارلیمان کی نشست سے استعفیٰ دے دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

برطانیہ کے سابق وزیر اعظم بورس جانسن نے اپنی پارلیمان کی نشست سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

بورس جانسن کو ایک پارلیمانی تحقیقات کا سامنا ہے کہ کیا انہوں نے کرونا وبا کے دوران لاک ڈاؤن کی پابندیوں کے خلاف وزیر اعظم کی رہائش گاہ 10 ڈاؤننگ سٹریٹ میں منعقدہ پارٹی کے حوالے سے ہاؤس آف کامنز کو گمراہ کیا تھا؟

بورس جانسن نے اپنے استعفیٰ میں کہا کہ مجھے مٹھی بھر لوگ زبردستی نکالنے کے درپے ہیں مگر ان کے دعووں کی حمایت میں کوئی ثبوت موجود نہیں ہے۔

سابق برطانوی وزیر اعظم پر الزام ہے کہ انہوں نے اپنی سرکاری رہائش گاہ پر سماجی فاصلے سمیت دیگر کرونا پابندیوں کو ملحوظ خاطر نہیں رکھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں