ٹویٹرکے مقابلے میں نئی ایپ کے اشتہارات میں اوپرا ونفری اوردلائی لاما کی امکانی شرکت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

فیس بک کے مالک مارک زکربرگ ٹویٹر کا مقابلہ کرنے کے لیے ایک پلیٹ فارم لانچ کررہے ہیں ، جس کے لیے لاکھوں مداحوں والی بااثر شخصیات کی مدد حاصل کرنے کی کوشش کررہے ہیں جن میں اوپرا ونفری اور دلائی لاما شامل ہیں۔

ٹیک نیوز سائٹ دی ورج نے سب سے پہلے ان تفصیلات کا انکشاف کیا ہے۔ اس کے مطابق، اس منصوبے کو اندرونی طور پر پروجیکٹ 92 کا کوڈ نام دیا گیا ہے۔ اسے ممکنہ طور پر تھریڈز کے نام سے عام کیا جائے گا۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ میٹا کے چیف پروڈکٹ آفیسر کرس کاکس نے جمعرات کو ایک اندرونی میٹنگ میں بات کی کہ یہ ایپ "ٹوئٹر کے لیے ہمارا جواب" ہے۔

نئی ایپ ٹویٹر کے ساتھ مقابلہ کرے گی اور ایلون مسک کے لیے بڑھتی ہوئے مشکلات سے فائدہ اٹھانے کی کوشش کرے گی۔

کاکس نے مبینہ طور پر میٹا کے عملے کو بتایا: "ہم تخلیق کاروں اور عوامی شخصیات کی جانب سے سن رہے ہیں ، جو ایک ایسا پلیٹ فارم رکھنے میں دلچسپی رکھتے ہیں جو سمجھداری سے چلایا جائے، کہ وہ یقین رکھتے ہیں کہ وہ اس پر بھروسہ اور انحصار کر سکتے ہیں۔"


اہم شخصیات سے رابطے

کاکس نے عملے کو بتایا کہ میٹا نے اوپرا ونفری اور دلائی لاما سمیت اعلی پروفائل ٹویٹر صارفین کے ساتھ بات چیت کی ہے اور انہیں نئی ایپ پر اکاؤنٹس کھولنے کی ترغیب دی ہے۔

میٹا اوپرا ونفری کے ٹوئٹر پر 42 ملین سے زیادہ فالوورز ہیں اور دلائی لاما کے 19 ملین کے قریب ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایپ کے لیے کوڈنگ جنوری میں شروع ہوئی تھی اور اسے "جلد سے جلد" دستیاب کرایا جائے گا۔

سابقہ رپورٹس کے مطابق یہ ایپ انسٹاگرام پر مبنی ہوگی اور صارفین اپنے انسٹاگرام یوزر نیم اور پاس ورڈ کے ساتھ لاگ ان کر سکیں گے۔ اپنے فالوورز، یوزر بائیو کو نئی ایپ پر لے جا سکیں گے۔

ورج کے ذریعے شیئر کی گئی ایپ کے اسکرین شاٹ میں ٹویٹر کی طرح کا ایک انٹرفیس دکھایا گیا، جس میں بلیو ٹِکس، پروفائل پکچرز، اور لائک، ریپلائی اور ریٹویٹ بٹن شامل تھے۔


ٹویٹر کا مشکل دور

یہ قابل ذکر ہے کہ ایلون مسک کی قیادت میں ٹویٹر ایک ہنگامہ خیز وقت سے گزرا، حالانکہ سربراہ کا اصرار ہے کہ گذشتہ اکتوبر میں کمپنی کو خریدنے کے بعد سے پلیٹ فارم کے صارفین کی تعداد میں کمی نہیں آئی ہے۔

مسک نے ٹویٹر خریدنے کے ہفتوں بعد دعویٰ کیا کہ یومیہ متحرک صارفین کی تعداد 250 ملین سے زیادہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے۔ تاہم، اشتہارات پر منحصر کاروبار میں ٹوئٹر کو مالی مسائل کا سامنا ہے۔

نیویارک ٹائمز نے پیر کو خبر دی کہ مئی کے پہلے ہفتے میں ٹویٹر کے اشتہارات کی آمدنی پچھلے سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 59 فیصد کم تھی، جو پلیٹ فارم کے بارے میں خدشات کو ظاہر کرتی ہے۔

پچھلے مہینے، ٹویٹر نے ایلون مسک کو ہٹا کے این بی سی یونیورسل کی ٹیلی ویژن ایڈورٹائزنگ ایگزیکٹو لنڈا آئیکارینو کو اپنا نیا سی ای او نامزد کیا ہے.

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں