سعودی عرب:یمن سرحد پرایتھوپیائی افرادکی ہلاکت سے متعلق ایچ آرڈبلیو کی رپورٹ مسترد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب نے انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ہیومین رائٹس واچ (ایچ آر ڈبلیو) کا یہ الزام مسترد کردیا ہے کہ سعودی فورسز نے یمن کے ساتھ واقع سرحد پر ایتھوپیا کے سیکڑوں باشندوں ہلاک کردیا ہے۔

سعودی حکومت کے ایک سرکاری ذریعے اپنی شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر فرانسیسی خبررساں ایجنسی اے ایف پی سے گفتگو میں کہا کہ ایسے تمام الزامات بالکل بے بنیاد اور من گھڑت ہیں۔

اس ذریعے نے کہا کہ ’’سعودی سرحدی محافظوں کی ایتھوپیائی باشندوں پر فائرنگ سے متعلق ہیومن رائٹس واچ کی رپورٹ میں مشمولہ الزامات بالکل بے بنیاد ہیں اور یہ کوئی قابل اعتماد یا معتبر ذرائع پر مبنی نہیں‘‘۔

واضح رہے کہ سعودی حکام نے 2022ء میں اقوام متحدہ کے حکام کی جانب سے عاید کردہ ایسے ہی الزامات کی سختی سے تردید کی تھی۔انھوں نے بھی یہ الزام عاید کیا تھا کہ سعودی عرب کے سرحدی محافظوں نے منظم انداز میں تارکین وطن کو ہلاک کیا تھا۔

ہیومن رائٹس واچ نے اپنی رپورٹ میں یہ الزام عاید کیا ہے کہ سعودی سرحدی محافظوں نے شدید فائرنگ کی تھی اور تارکین وطن کو ہلاک کرنے کے لیے گولہ بارود کا بھی استعمال کیا تھا۔ان میں زیادہ تر ایتھوپیائی باشندے تھے جو یمن سے سعودی عرب کی حدود میں دراندازی کی کوشش کررہے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں