روس : یوگینی پریگوژن کی آبائی شہر سینٹ پیٹرزبرگ کے مضافات میں آخری رسوم کے بعد تدفین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

روس کی واگنر ملیشیا کے سربراہ یوگینی پریگوژن کی آخری رسومات ان کے آبائی شہر سینٹ پیٹرزبرگ کے مضافات میں واقع ایک قبرستان میں نجی طور پر ادا کردی گئی ہیں۔

واگنر کی پریس سروس نے ٹیلی گرام پر ایک مختصر پوسٹ میں کہا کہ ’’یوگینی وکتوروفچ کو الوداع کہنے کی تقریب ایک بند فارمیٹ میں ہوئی ہے۔ جو لوگ انھیں خداحافظ کہنا چاہتے ہیں وہ پورو کھوفسکوئے قبرستان میں جا سکتے ہیں‘‘۔اس بیان کے ساتھ پریگوژن کی ایک تصویر بھی تھی۔

انھوں نے دوماہ قبل روس کی دفاعی قیادت کے خلاف بغاوت برپا کردی تھی اور ان کے زیرکمان کرائے کی ملیشیا نے ماسکو کی جانب فوجی چڑھائی کی کوشش کی تھی۔ان کی یہ مسلح بغاوت صدر ولادی میرپوتین کے لیے 1999ء میں برسراقتدارآنے کے بعد سے سب سے بڑا چیلنج تھی لیکن اس بغاوت کے ٹھیک دو ماہ بعد 23 اگست کو وہ اپنے طیارے کے حادثے میں ہلاک ہوگئے تھے۔

پریگوژن کی آخری رسومات کے انتظامات رازداری میں کیے گئے تھے اور کریملن نے اس سے قبل کہا تھا کہ صدرپوتین آخری رسومات میں شرکت نہیں کریں گے۔

ماسکو کے شمال میں ان کا ایمبریر لیگیسی 600 نجی طیارہ گر کر تباہ ہو گیا تھا جس کے نتیجے میں واگنر کی دو دیگر اعلیٰ شخصیات، پریگوژن کے چار ذاتی محافظ اور عملہ کے تین ارکان بھی ہلاک ہو گئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں