المسجد الحرام کی صفائی دن میں دس مرتبہ صرف 20 منٹ میں کیسے مکمل کی جاتی ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

المسجد الحرام مکہ مکرمہ کی صفائی دن میں دس مرتبہ اور وہ بھی 20 منٹ میں کی جاتی ہے۔ المسجد الحرام انتظامیہ کے ماتحت شعبہ صفائی کا کہنا ہے’ زائرین کی بڑی تعداد میں موجودگی کے باوجود 15 سے 20 منٹ میں صفائی کا کام مکمل کر لیا جاتا ہے‘۔

مطاف اور خانہ کعبہ کے اطراف کی صفائی میں 200 کارکن حصہ لیتے ہیں۔ حرمین شریفین انتظامیہ نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر تصاویر اور ویڈیو شیئر کی ہیں جن میں دیکھا جا سکتا ہے کہ صفائی کارکنان انتہائی مستعدی کے ساتھ صفائی کا کام کر رہے ہیں۔

صفائی کے کام میں ماحول دوست اشیا استعمال کی جاتی ہیں۔ شروعات خانہ کعبہ کے دروازے کی چوکھٹ (ملتزم) سے ہوتی ہے جبکہ مطاف کی دھلائی کی شروعات طواف کرنے والوں کی سمت سے کی جاتی ہے۔

حجر اسماعیل اور شدروان کی صفائی ہوتی ہے۔ حجر اسود کو معطر کیا جاتا ہے۔ رکن یمانی کو گیلے کپڑے سے صاف اور پھر معطر کیا جاتا ہے۔ مقام ابراہیم کو بھی دھویا جاتا ہے۔

صفائی کا مکمل ہونے کے بعد المسجد الحرام کے فرش کو خشک اور معطر کیا جاتا ہے۔

صفائی کارکنان کی انتہائی کوشش ہوتی ہے کہ زائرین کے طواف اور عبادت میں کسی قسم کا خلل پیدا نہ ہو۔ یہ تمام کام تربیت یافتہ سعودی عملے کی نگرانی میں ہوتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں