50 یرغمالیوں کی رہائی کی ڈیل حماس کے ایندھن کے مطالبے کی وجہ سے ناکام ہوگئی: ذرائع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی اخبار’وال اسٹریٹ جرنل‘ کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی حکام نے پیر کی شام کہا ہے کہ غزہ کی پٹی میں 50 قیدیوں کی رہائی کے لیے مذاکرات حماس کے اس مطالبے کی وجہ سے ناکام ہو گئے ہیں کہ جس میں حماس نے غزہ کی پٹی کو ایندھن کی سپلائی کا مطالبہ کیا تھا۔

اخبار نے اسرائیلی حکام کی شناخت ظاہر نہیں کی اور بتایا ان کے مطابق مذاکرات اگلے مرحلے تک پہنچ چکے تھے لیکن اسرائیل مصر کے راستے غزہ تک ایندھن پہنچانے پر راضی نہیں ہوا۔

اخبار نے بتایا کہ اسرائیلی حکام نے کہا کہ وہ ایندھن کی ترسیل کی اجازت دینے سے پہلے تمام زیر حراست افراد کو رہا کرنا چاہتے ہیں۔

دو مغویوں کو انسانی بنیادوں پر رہا کر دیا گیا

اس سے قبل پیر کو حماس نے مصری اور قطری ثالثی کے ساتھ انسانی ہمدردی اور طبی مجبوری کی وجوہات کی بنا پر حراست میں لیے گئے دو اسرائیلیوں کو رہا کردیا تھا۔

حماس نے ٹیلی گرام کے ذریعے ایک بیان میں مزید کہا کہ " القسام بریگیڈز نے مصری- قطری ثالثی کے ذریعے دو قیدیوں، نوریت یتزاک اور یوچید لفشٹز کو رہا کیا ہے۔ گذشتہ جمعہ کو ان دونوں کو اسرائیل نے وصول کرنے سے انکار کردیا تھا"۔

"دو امریکیوں کو رہا کیا گیا"

جمعہ کے روز حماس نے دو امریکی خواتین کو رہا کر دیا تھا جنہیں 7 اکتوبر کو جنوبی اسرائیل پر بڑے حملے میں حراست میں لیا گیا تھا۔

القسام بریگیڈز نے ہفتے کے روز کہا کہ وہ دو اسرائیلی قیدیوں کو رہا کرنے کے لیے تیار ہے، جنہیں اس نے "انسانی بنیادوں پر اور معاوضے کے بغیر" رہا کرنے کی پیشکش کی تھی۔ دونوں امریکی قیدیوں کو رہا کیا گیا تھا لیکن اس میں کہا گیا ہے کہ اسرائیل نے انہیں وصول کرنے سے انکار کر دیا۔

قابل ذکر ہے کہ 7 اکتوبر کو حماس نے غزہ کےاطراف کے علاقے میں اسرائیلی بستیوں پر اچانک حملہ کیا تھا، جس میں 1400 سے زائد افراد مارے گئے تھے، جن میں زیادہ تر عام شہری تھے۔

اسرائیلی فوج کی طرف سے جاری کردہ تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق فلسطینی مزاحمت کاروں نے اپنے ساتھ 222 افراد کو یرغمال بنایا جن میں غیر ملکی بھی شامل ہیں۔

جب کہ اسرائیل نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے غزہ کو فضائی اور میزائل حملوں سے تباہ کیا، جس میں فلسطینی وزارت صحت کے مطابق اب تک 5,087 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، جن میں زیادہ تر عام شہری ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں