ٹرمپ ریپبلکن متوقع صدارتی امیدوار ہوسکتے ہیں: بائیڈن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی صدر جو بائیڈن نے منگل کے روز سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی آئیووا میں جیت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس سے ثابت ہوتا ہے کہ وہ ریپبلکن نامزدگی کا ٹکٹ حاصل کرنے کے "سب سے زیادہ مقبول اور متوقع امیدوار" ہیں۔

امریکی صدر جو بائیڈن کا کہنا ہے کہ پیر کی شام ریاست آئیووا میں ہونے والے پرائمری انتخابات میں ان کے پیشرو ٹرمپ کی طرف سے حاصل کی گئی آسان فتح نومبر میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں حصہ لینے کے لیے ریپبلکن پارٹی کی نامزدگی حاصل کرنے کے لیے امکانات کا اظہار ہے۔

"ایکس" پلیٹ فارم پر ایک پوسٹ میں انہوں نے اپنے حامیوں سے اپنی مہم میں چندہ دینے کی اپیل کی۔ صدر بائیڈن نے کہا کہ "ایسا لگتا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے ابھی ریاست آئیووا جیتی ہے۔ وہ واضح طور پر دوسری جگہ پر سب سے زیادہ ممکنہ امیدوار ہوسکتے ہیں‘‘۔

سابق صدر نے ریاست آئیووا میں ریپبلکن پارٹی کے پرائمری انتخابات میں کامیابی حاصل کی، جس کا امریکی میڈیا نے پیر کی شام کو اعلان کیا تھا۔ اس کے نتیجے میں اس سال نومبر میں ہونے والے وائٹ ہاؤس کے انتخابات کے لیے ریپبلکن پارٹی کی دوڑ میں سب سے آگے ان کی پوزیشن مستحکم ہوگئی ہے۔

میڈیا نے رپورٹ کیا کہ ان کے حریف فلوریڈا کے گورنر رون ڈی سینٹیس آئیووا میں اقوام متحدہ میں سابق سفیر نکی ہیلی سے آگے دوسرے نمبر پر آئے ہیں۔

تقریباً 90 فیصد ووٹوں کی گنتی کے بعد ٹرمپ کو 50.9 فیصد ووٹ ملے جب کہ رون ڈی سینٹس کو21.4 فیصد اور نکی ہیلی کو19.0 فیصد ووٹ ملےتھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں