.

غیرقانونی طریقے سے حج کے لیے آئے98 ہزار افراد بے دخل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے سیکیورٹی حکام نے غیرقانونی طریقے سے بیرون اور اندرون ملک سے حج کے لیے مشاعرہ مقدسہ پہنچنے والے 98 ہزار افراد کو واپس کر دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ریاض کے سیکیورٹی جنرل کی جانب سے جاری ایک رپورٹ میں‌ بتایا گیا ہے کہ پولیس نے غیرقانونی طورپر مشاعر میں‌ پہنچنے والی 25 ہزار 216 کاروں اور دیگر گاڑیوں کو روک کر اُنہیں واپس کر دیا جبکہ مشاعر مقدسہ میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر 85 کاروں کو سیکیورٹی مراکز میں بند کر دیا گیا ہے۔

رپورٹ میں‌ بتایا گیا ہے کہ ٹریفک پولیس اور قانون نافذ کرنے والے ادارے ایام حج کے موقع پر حجاج کرام کی نگرانی، ان کی دیکھ بھال اور انہیں ہرممکن سہولت فراہم کرنے کے لیے چوکس ہیں۔ اس ضمن میں کسی بھی غیرقانونی نقل وحرکت پر بھی گہری نظر رکھی جا رہی ہے۔ حجاج کرام کی سہولت کے لیے مسجد حرام کے آس پاس 2602 کاروں کی پارکنگ کا انتظام کیا گیا ہے۔ مکہ مکرمہ بالخصوص حرمین کو ملانے والی شاہرات پر ٹریفک رواں رکھنے کے لیے بھی بھرپورانتظامات کیے گئے ہیں۔ ایمرجنسی پولیس اور ایمبولیس سروسز بھی عازمین حج کی سہولیات کے لیے ہمہ وقت مصروف ہیں۔

رپورٹ میں‌ بتایا گیا ہے کہ 15 ذیقعد کے بعد سب اب تک مکہ مکرمہ میں 1249 کاروں کو ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی اور غیرقانونی پارکنگ کے باعث بند کیا گیا۔