سعودی عرب اسکول میں تقریب کے دوران ہوائی فائرنگ کا نوٹس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی بیشہ گورنری میں ایک ہائی اسکول میں ہونے تقریب کے دوران ایک طالب علم کی جانب سے اندھا دھند ہوائی فائرنگ کے واقعے کے بعد اس کی انکوائری شروع کر دی گئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ہوائی فائرنگ کا یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب اسکول سے فارغ ہونے والے طلباء کے اعزاز میں الوداعی تقریب کا انعقاد کیا گیا تھا۔

اسکول میں اندھا دھند ہوائی فائرنگ کے واقعے کی فوٹیج سامنے آنے کے بعد محکمہ تعلیم نے اس کا نوٹس لے لیا ہے۔ فوٹیج میں ایک طالب علم کو ایک کار پر کھڑے ہو کر کلاشنکوف سے ہوائی فائرنگ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

بعد ازاں یہ فوٹیج سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی جس پر شہریوں نے فائرنگ کرنے والے طالب علم اور اسکول کی انتظامیہ کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

بیشہ گورنری میں محکمہ تعلیم کے ترجمان ناجی بن عایش السبیعی نے بتایا کہ وزارت تعلیم نے اس واقعے کی انکوائری کا حکم دیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہوائی فائرنگ کا واقعہ ایک طالب علم کا انفرادی فعل تھا جس میں اسکول کی انتظامیہ کا کوئی کردار نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ایک طالب علم کا کلاشنکوف لے کر اسکول آنا اور بلا روک ٹوک ہوائی فائرنگ کرنا باعث تشویش ہے۔ اس طرح کے واقعات طلباء کے لیے خطرناک ثابت ہوسکتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں