مصری فورسز کی قاہرہ کے نواح میں کارروائی، 6 مشتبہ جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

مصر کے دارالحکومت قاہرہ کے نواح میں پولیس نے ایک چھاپا مار کارروائی کے دوران میں چھے مشتبہ انتہا پسندوں کو ہلاک کردیا ہے۔

مصر کی وزارتِ داخلہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ان مشتبہ انتہا پسندوں نے قاہرہ کے نواح میں واقع علاقہ 6 اکتوبر میں پناہ لے رکھی تھی، سکیورٹی فورسز کی آمد پر انھوں نے فائر نگ شروع کردی اور پھر وہ جوابی فائرنگ میں مارے گئے ہیں ۔

وزارت کے مطابق اس کو ایسی اطلاعات ملی تھیں کہ یہ مشتبہ انتہا پسند اہم تنصیبات ، قبطی عیسائیوں کے عبادت خانوں اور سکیورٹی اہلکاروں پر حملوں کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔

سکیورٹی فورسز کو ان کے ٹھکانے سے تین خود کار رائفلیں ، دوسرے ہتھیار اور گولہ بارود ملا ہے۔اس کے علاوہ وہاں سے انتہا پسند وں کا پروپیگنڈا لٹریچر بھی برآمد ہوا ہے۔

تاہم وزارت داخلہ کے بیان میں یہ وضاحت نہیں کی گئی ہے کہ مصری فورسز نے مشتبہ جنگجوؤں کے خلاف یہ چھاپا مار کارروائی کب کی تھی اور آیا وہ کسی انتہا پسند گروپ سے وابستہ تھے یا نہیں۔

اس چھاپا مار کارروائی سے ایک روز قبل ہی مصری فورسز نے قاہرہ کے نزدیک قبطی عیسائیوں کے ایک گرجا گھر پر خودکش بم حملے کی کوشش ناکام بنا دی تھی۔یہ حملہ آور بمبار سخت سکیورٹی کی وجہ سے اپنے ہدف تک پہنچنے میں کامیا ب نہیں ہوسکا تھا اور اس نے گرجا گھر کے باہر خود کو دھماکے سے اڑا دیا تھا۔

وزارتِ داخلہ نے اتوار کو اس ناکام خودکش بم حملے میں ملوث ہونے کے الزام میں ایک دہشت گرد سیل سے وابستہ چھے مشتبہ افراد کی گرفتاری کی اطلاع دی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں