شام کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال سے گریز کرے : جان بولٹن کا انتباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا کے قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن نے شامی حکومت کو خبردار کیا ہے کہ وہ اپنے ملک سے امریکی فوجیوں کے انخلا کے بعد کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال سے گریز کرے۔

جان بولٹن اسرائیلی دارالحکومت تل ابیب کے لیے سفر کے دوران میں اپنے ہمراہ آنے والے صحافیوں سے طیارے میں گفتگو کررہے تھے۔انھوں نے کہا کہ شامی رجیم کی جانب سے کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے خلاف امریکا کے موقف میں کوئی تبدیلی رو نما نہیں ہوئی ہے۔اگر کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال کیا جاتا ہے تو جس طرح ہم پہلے دو مرتبہ سخت ردعمل کا اظہار کرچکے ہیں تو اب کے بار ایک مرتبہ پھر ایسا ہی کریں گے۔
انھوں نے اسد رجیم کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ اس کو کسی بھی صورت میں کسی دھوکے میں نہیں رہنا چاہیے۔

جان بولٹن نے کہا کہ ’’اب کہ ہم انخلا کے حالات کا جائزہ لے رہے ہیں اور اس کی وضاحت کررہے ہیں کہ یہ کیسے ہوگا۔ہم تو یہ نہیں چاہتے ہیں کہ اسد رجیم وسیع پیمانے پر تباہی پھیلانے والے ہتھیاروں کو استعمال کرے۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ایک سینیر عہدہ دار نے جمعہ کو کہا تھا کہ شام سے فوجیوں کے انخلا کے لیے ابھی کوئی نظام الاوقات وضع نہیں کیا گیا ہے لیکن امریکا وہاں غیر معینہ عرصے کے لیے رہنے کا بھی کوئی ارادہ نہیں رکھتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں