.

شام: دیر الزور میں پاسداران انقلاب اور اسد نواز ملیشیا میں کشیدگی

ایرانی پاسداران نے ایک چوکی سے اسدی ملیشیا کو بے دخل کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام کے مشرقی شہر دیر الزور میں المیادین کے علاقے میں بشار الاسد کے حامی جنگجوئوں اور ایرانی پاسداران انقلاب کے درمیان کشیدگی کی اطلاعات ہیں۔

اخباری خبروں کے مطابق پاسداران انقلاب نے شاہراہ کورنیش پر قائم کردہ فوجی چوکی سے اسد جواز نیشنل ڈیفنس ملیشیا کے عناصر کو وہاں سے نکال دیا ہے۔

شام میں اپوزیشن کے حامی 'دیر الزور 24' نیٹ ورک نے پاسداران انقلاب کے ایک ذریعے کےحوالے سے بتایا ہے کہ پاسداران انقلاب نے کورنیش شاہراہ پر قائم چوکی سے نکال باہر کرنے کے بعد اس پر قبضہ کر لیا ہے۔ بشارالاسد کے حامی دونوں گروپوں کے درمیان کشیدگی میں اضافہ ہوتا دکھائی دے رہا ہے۔

پاسداران انقلاب نے کورنیشن چیک پوسٹ پر قبضہ ایک ایسے وقت میں کیا ہے جب نیشنل ڈیفنس ملیشیا کے بعض عناصر منحرف ہونے کے بعد اپوزیشن سے جا ملے تھے۔

نیشنل ڈیفنس ملیشیا نے المیادین میں بشار الاسد کی فوج کو پاسداران انقلاب کی مداخلت کی شکایت کی ہے۔

پاسداران انقلاب ملیشیا دیر الزور کے اہم اداروں پر اپنی بالادستی قائم کرنا چاہتے ہیں۔ پاسداران کی طرف سے مقامی آبادی کو لالچ کے ذریعے اپنے ساتھ ملانے کی کوشش کی جا رہی ہے۔