.

مصر: جزیرہ نما سیناء میں واقع قصبہ شیخ زوید میں جنگجوؤں کاحملہ، پانچ فوجی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے شورش زدہ علاقے جزیرہ نماسیناء میں واقع قصبے شیخ زوید میں ایک چیک پوسٹ پر داعش کے جنگجوؤں نے ہفتے کے روزحملہ کیا ہے جس کے نتیجے میں پانچ فوجی ہلاک اور چھے زخمی ہوگئے ہیں۔

مصری حکام نے بتایا ہے کہ حملے میں زخمی فوجیوں کو بحرمتوسط کے کنارے واقع شہرالعریش میں فوجی اسپتال میں منتقل کردیا گیا ہے۔

انھوں نے مزید بتایا ہے کہ سکیورٹی اہلکاروں کی جوابی فائرنگ سے تین جنگجو ہلاک ہوگئے ہیں اور علاقے میں مزید نفری بھیج دی گئی ہے۔

جزیرہ نماسیناء کے شمالی حصے میں مصرکی سکیورٹی فورسز اورداعش سے وابستہ جنگجوؤں کے درمیان آئے دن جھڑپیں ہوتی رہتی ہیں۔اس علاقے میں 2013ء میں مصر کے پہلے منتخب صدر ڈاکٹر محمد مرسی (اب مرحوم) کی حکومت کی برطرفی کے بعد سے شورش بپا ہے۔

داعش کے جنگجوؤں نے اس علاقے میں مصری سکیورٹی فورسز،عیسائی اقلیت اور فوج اور پولیس کے ساتھ تعاون کرنے والے عام افراد پر بیسیوں حملے کیے ہیں۔تاہم فروری 2018ء میں مصری فوج کی بڑے پیمانے پر کارروائی کے بعد سے اس علاقے میں داعش کے حملوں میں کمی واقع ہوئی ہے۔

مصری فوج نے سیناء کے علاوہ نیل ڈیلٹا اور لیبیا کے ساتھ واقع سرحدی علاقے میں بھی جنگجوؤں کے خلاف کارروائی کی تھی۔اس میں بھاری مشینری سے ان کے ٹھکانوں کو تباہ کردیاتھا اوربڑی تعداد میں مشتبہ جنگجوؤں کو ہلاک کردیا تھا یا گرفتارکر لیا تھا۔