.

ایرانی ایندھن کا جہاز نہر سوئز کی جانب گامزن ہے: ٹینکرز ٹریکرز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بحری جہازوں کی نقل و حرکت پر نظر رکھنے والی ویب سائٹ " ٹینکرز ٹریکرز" کے مطابق ایران کا ایک آئل ٹینکر نہر سوئز کی جانب رواں دواں ہے اور توقع ہے کہ وہ دو سے تین روز کے دوران منزل تک پہنچ جائے گا۔ اس سے قبل لبنانی ملیشیا حزب اللہ کے سکریٹری جنرل حسن نصر اللہ نے بتایا تھا کہ مذکورہ آئل ٹینکر لبنان کو ایندھن فراہم کرے گا۔

ویب سائٹ کے مطابق ہفتے کے روز مصنوعی سیاروں کی جانب سے لی گئی تصاویر میں یہ بات سامنے آئی تھی کہ بجلی کے نیٹ ورکوں کے چلانے کے واسطے ایندھن کی کھیپ لے جانے والے بحری جہاز نے نہر سوئز کی جانب اپنا سفر جاری رکھا ہوا ہے۔ البتہ نہر سوئز تک پہنچنے سے قبل جہاز کی حتمی منزل کا تعین نہیں کیا جا سکتا۔

اس سے قبل ٹینکر ٹریکرز ویب سائٹ نے جمعے کے روز بتایا تھا کہ سیٹلائٹ تصاویر سے معلوم ہوتا ہے کہ لبنان کی جانب رواں دواں ایندھن کے ایرانی ٹینکرز ابھی تک بحر احمر میں کھڑے ہیں۔

لبنان کو ایندھن کے سیکٹر میں سنگین بحران کا سامنا ہے۔ یہ صورت حال مرکزی بینک کی جانب سے ایندھن کے سیکٹر کے لیے سبسڈی ختم کرنے کے فیصلے کے بعد سامنے آئی۔ اس کے نتیجے میں ملک میں ہر چیز کی قیمت میں اضافہ ہوا ہے۔

ایران نے اعلان کیا تھا کہ وہ لبنانی حکومت کو "ایندھن فروخت کرنے" پر تیار ہے۔