فلسطینی وزیراعظم کا غزہ پر اسرائیلی جارحیت فوری طورپررکوانے کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

فلسطینی اتھارٹی کے وزیراعظم محمد اشتیہ نے عالمی برادری سے غزہ میں اسرائیل کی جارحیت کو رکوانے میں مدد دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

محمد اشتیہ نے اتوارکے روزمغربی کنارے کے شہر رام اللہ میں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ ’’غزہ میں شہید اورزخمی بچّوں کی تصویر کو انسانیت کے ضمیر کو ہلانا ہوگا اور جارحیت کو فوری طور پر روکنے کے لیے کام کرنا ہوگا‘‘۔انھوں نے غزہ میں شہید ہونے والے بعض بچّوں کی تصاویر اٹھا رکھی تھیں۔

انھوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا اجلاس پیر کوہوگا جس میں اس مسئلہ پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

انھوں نے کہا کہ سلامتی کونسل سے فلسطینی عوام کو تحفظ فراہم کرنے کے لیے سنجیدہ اورقابلِ عمل فیصلہ لینے کی ضرورت ہے۔ہم اس عالمی ادارے سے محض مذمت سے زیادہ کچھ چاہتے ہیں۔

غزہ کی پٹی میں اسرائیل اور فلسطینی مزاحمتی تنظیم حرکۃ الجہادالاسلامی کے درمیان سرحد پار تشدد کا بدترین سلسلہ جاری ہے۔اسرائیلی فوج نے اتوار کوغزہ میں مختلف علاقوں پر بمباری کی تھی،جواب میں فلسطینی تنظیم نے راکٹ باری کی تھی۔

غزہ پرجمعہ کے روز اسرائیلی حملے کے آغاز سے اب تک شہید فلسطینیوں کی تعداد 31 ہو گئی ہے۔ان مرنے والوں میں چھے بچّے اور چارخواتین شامل ہیں۔فلسطینی وزارت صحت نے بتایا کہ جمعہ سے اب تک ڈھائی سو سے زیادہ افراد زخمی ہوئے ہیں اور وہ مختلف اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔

فلسطینی عسکریت پسندوں نے اسرائیلی شہروں اور قصبوں پردرجنوں راکٹ داغے ہیں جس سے لاکھوں صہیونیوں کے معمولاتِ زندگی درہم برہم ہو گئےہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں