سعودی معیشت

سونے اور تانبے سمیت سعودی عرب کی نئی ارضیاتی دریافتیں

مدینہ منورہ میں چار مقامات پر تانبے کے ذخائر دریافت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی جیولوجیکل سروے نے مملکت میں معدنی ذخائر کی تلاش شروع کرنے کے منصوبے کا اعلان کر دیا۔ سروے کی نمائندگی ’’سنٹر فار سروے انگ اینڈ ایکسپلوریشن فار منزلز‘‘ کرتا ہے۔

اس موقع پر بتایا گیا کہ مدینہ منورہ میں چار مقامات پر سونے اور تانبے کے ذخائر بھی دریافت ہوئے ہیں۔ مدینہ منورہ میں ’’حجاز کے علاقے ام البراک کی ڈھال ‘‘ ابا الرحا کی حدود میں خام سونے کی موجودگی دریافت کی گئی ہے۔ یہ اس خطے میں نئی دریافت ہے۔ یہ خطہ بحر احمر کے دوسری جانب نکاسیب سمندر کو فطرتی توسیع دیتا ہے۔ اسی طرح خام تانبا بھی دریافت کرلیا گیا ہے۔

خام تانبے کی مدینہ کے چار مقامات پر موجودگی کا پتہ چلتا ہے۔ یہ مقامات مدینہ منورہ کی وادی فرع کے مضیق کے علاقے میں موجود ہیں۔ یہ دریافتیں خصوصی تانبے کی ذخائر کے امکانات بھی روشن کرتی ہیں۔ جیسے بکھرے ہوئے معدنی چالکو سائٹ (سی یو 2 ایس) ۔ اسی طرح کچھ ثانوی تانبے کے کاربونیٹ جیسے میلا چائٹ، ایزو رائٹ اور تانبے کی خام دھات بھی دریافت ہو سکتی ہے۔

ان قومی دریافتوں کو 2022 کے دوران دریافتوں کی فہرست میں شامل کر لیا گیا ہے۔ ان دریافتوں سے کان کنی میں سرمایہ کاری کی رفتار تیز ہوجائے گی اور ان معدنیات سے قومی معیشت کو سہارا ملے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں