فلسطین اسرائیل تنازع

اسرائیل حماس معاہدہ حقیقی امید کا لمحہ ہے: فرانسیسی وزیر خارجہ

امید ہے حماس ہمارے شہری بھی رہا کرے گا اور اسرائیل شہری آبادیوں کو تحفظ دے گا: فرانس انٹر ریڈیو سے گفتگو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

فرانس نے اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ بندی معاہدے کا خیر مقدم کرتے ہوئے امید ظاہر کی ہے کہ اب فرانسیسی یرغمالی بھی رہا ہوں گے۔ فرانس کی طرف سے اس معاہدے کے لیے قطر کی کوشش کی بھی تعریف کی گئی ہے۔

فرانسیسی وزیر خارجہ کیتھرائن کولونا کے حوالے سے فرانس انٹر ریڈیو کے بتایا ہے کہ انہوں نے اب فرانسیسی یرغمالی شہریوں کی رہائی کے لیے بھی کام آگے بڑھے گا۔' ہم امید کرتے ہیں کہ حماس ہمارے شہری بھی رہا کر دے گی ، کہ ہم ان کے لیے بہت محنت کر رہے ہیں۔ '

واضح رہے سات اکتوبر سے فرانس کے آٹھ شہری لاپتہ ہیں، تاہم یہ ابھی کسی کو واضح نہیں ہے کہ یہ تمام کے تمام ہی غزہ میں یرغمال بنا کر رکھے گئے ہیں۔ یا معاملہ اس سے مختلف ہے۔ وزیر خارجہ کولونا نے کہا ، ہمیں یرغمال بنائے گئے اور دوسروں کے درمیان فرق کرنا ہو گا۔'

کولونا نے اس معاہدے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ' یہ حقیقی امید کا لمحہ ہے۔ اس سلسلے میں قطر کی کوششیں قابل تعریف ہیں۔ یہ کئی ہفتوں کی بڑی مشکل اور تکلیف دہ بات چیت اور کوشش سے ممکن ہوا ہے۔'

فرانس کی وزیر خارجہ نے کہا اسرائیل کو شہری آبادی کو محفوظ کرنے کے لیے مزید کچھ کرنا ہوگا۔' انہوں نے کہا جیسا کہ ہم نے پچھلے ہفتوں کے دوران بہت زیادہ ہلاکتیں ہو چکی دیکھی ہیں۔'

خیال رہے اسرائیل کا کل جانی نقصان 1264 بتایا جاتا ہے جبکہ غزہ میں فلسطینیوں کی 14100 ہلاکتیں اسرائیلی بمباری سے ہوئیں۔ جن میں تقریباً چھ ہزار کے قریب صرف فلسطینی بچوں کی شہادتیں ہیں۔ اسی طرح فلسطینی عورتوں کی شہادتیں بھی لگ بھگ چار ہزار تک چلی گئی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں