غزہ میں جنگ کا خون خوار المیہ، شیرخوار دودھ کے بجائے پانی پر زندہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

غزہ کی پٹی میں اسرائیل کی طرف سے مسلط کی گئی جنگ کے دل دہلا دینے والے مناظر دیکھنے کو مل رہےہیں۔ شہری خوراک کی شدید قلت کا شکار ہیں۔

سوشل میڈیا پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو میں غزہ میں صرف چند ہفتے کے بچے کو دودھ کے بجائے پانی پیتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

دودھ کے بجائے پانی!

غزہ کی پٹی پر اسرائیلی محاصرے اور آبادی کی بنیادی ضروریات کی کمی کے دوران جاری جنگ کے باعث بنیادی اشیائے خوردونوش کی دستیابی ناپید ہو گئی ہے۔

چھوٹا بچہ اپنی بے گھر ماں کی بانہوں میں دیکھا جا سکتا ہے جب کہ ماں اسے فیڈر میں دودھ کی جگہ پانی پلا رہی ہے۔

غزہ میں جاری خوفناک جنگ سے کوئی بھی محفوظ نہیں۔ مائیں اپنے نوزائیدہ بچوں کو خوراک مہیا کرنے میں ناکام ہیں۔ جب کہ اقوام متحدہ نے خبردار کیا ہے کہ غزہ میں پانچ لاکھ افراد شدید نوعیت کے قحط اور فاکہ کشی کا شکار ہیں۔

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتیریس نے جمعے کے روز کہا تھا کہ غزہ کی پٹی تباہ کن قحط کے دہانے پر ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’ جو کچھ وہاں ہو رہا ہے ایسا ہم نے کبھی نہیں دیکھا‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں