عمران خان کی پیشی پر "گڈ ٹو سی یو" کہنے پر چیف جسٹس کی وضاحت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سابق وزیر اعظم اور چئیرمین پاکستان تحریک انصاف [پی ٹی آئی] عمران خان کو ان کی عدالت میں پیشی کے دوران ’’گڈ ٹو سی یو‘‘ کہنے پر تنقید کے معاملے پر چیف جسٹس نے اپنے ریمارکس میں وضاحت کی ہے۔

منگل کے روز ایک مقدمے کی سماعت کے دوران سپریم کورٹ آف پاکستان کے چیف جسٹس عمر عطا بندیال نے وکیل اصغر سبزواری سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ 'آپ کو دیکھ کر خوشی ہوئی۔ آپ ایک عرصے کے بعد میری عدالت میں آئے ہیں۔'

چیف جسٹس نے عمران خان کو مقدمے کی سماعت کے دوران گڈ ٹو سی یو کہنے پر ہونے والی تنقید کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ "آپ کو دیکھ کر خوشی ہوئی، ایسا ہر کسی کو کہتا ہوں۔ مجھے گڈ ٹو سی یو کہنے پر تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔ میں ہر ایک کو احترام دیتا ہوں۔ ادب و اخلاق تو سب کے لیے ضروری ہے۔ ادب و اخلاق کے بغیر مزہ نہیں۔"

واضح رہے کہ چیف جسٹس عمر عطا بندیال نے اسلام آباد ہائی کورٹ سے عمران خان کی گرفتاری کے خلاف سماعت کے دوران عمران خان کو جب عدالت میں پیش کیا گیا تو چیف جسٹس نے انہیں مخاطب کرتے ہوئے گڈ ٹو سی یو کے الفاظ استعمال کئے۔ پاکستان کی حزب اقتدار جماعتوں نے اس بات کو پارلیمان کے اندر اور باہر شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔

مقبول خبریں اہم خبریں