فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ کے لیے پاکستان سے 90 ٹن امدادی سامان کی دوسری کھیپ روانہ

پاکستانی وزارت خارجہ سے جاری بیان میں اسرائیل کی جانب سے غزہ میں محصور خواتین اور بچوں سمیت شہریوں کے خلاف طاقت کے ’وحشیانہ، غیر متناسب اور اندھا دھند‘ استعمال کی مذمت کی گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پاکستان کے نگران وزیر خارجہ جلیل عباس جیلانی اور وزیر برائے انسانی حقوق خلیل جارج نے غزہ کے عوام کے لیے پاکستان سے امدادی سامان کی دوسری کھیپ لے جانے والی خصوصی پرواز کو منگل کو اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ سے روانہ کیا۔

دفتر خارجہ کے مطابق امدادی سامان کی روانگی کے موقع پر ہونے والی تقریب میں اسلام آباد میں فلسطینی سفیر احمد جواد ربیعی، وزارت خارجہ اور این ڈی ایم اے کے سینئیر حکام بھی موجود تھے۔ وزیر خارجہ جلیل عباس جیلانی نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے فلسطینی بھائیوں اور بہنوں کے ساتھ پاکستان کی مکمل یکجہتی کا اظہار کیا اور اسرائیل کی جانب سے غزہ میں محصور خواتین اور بچوں سمیت شہریوں کے خلاف طاقت کے وحشیانہ، غیر متناسب اور اندھا دھند استعمال کی مذمت کی۔

وزیر خارجہ نے اسرائیلی جارحیت کے فوری خاتمے اور غزہ کا محاصرہ ختم کرنے کی فوری ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے انصاف اور انسانیت کے اصولوں کو برقرار رکھنے اور غزہ کے لوگوں کو انسانی امداد کی فراہمی میں سہولت فراہم کرنے پر زور دیا۔کھیپ میں حفظان صحت کی کٹس، ادویات اور فوڈ پیکجز شامل ہیں۔غزہ کے عوام کے لئے پاکستان سے امدادی سامان کی پہلی کھیپ 19 اکتوبر 2023 کو بھیجی گئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں